Live Updates

قبائلی اضلاع میں ہونے والے انتخابات میں پی کے 106کا مکمل نتیجہ آگیا

غیر حتمی اور غیر سرکاری نتائج کے مطابق پاکستان تحریکِ انصاف ناکام، آزاد امیدوار کامیاب

Usman Khadim Kamboh عثمان خادم کمبوہ ہفتہ جولائی 23:57

قبائلی اضلاع میں ہونے والے انتخابات میں پی کے 106کا مکمل نتیجہ آگیا
خیبر ایجنسی ( اردوپوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 20جولائی 2019ء) قبائلی اضلاع میں ہونے والے انتخابات میں پی کے 106کا مکمل نتیجہ آگیا ہے۔ غیر حتمی اور غیر سرکاری نتائج کے مطابق پاکستان تحریکِ انصاف کا امیدوار ناکام ہو گیا ہے جبکہ آزاد امیدوار نے میدان مار لیا ہے۔ غیر حتمی اور غیر سرکاری نتائج کے مطابق پی کے 106 خیبر2میں بھی آزاد امیدوار نے میدان مارلیا ہے، آزاد امیدوار بلال آفریدی 12 ہزار 800 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے ہیں جبکہ غیر حتمی اور غیر سرکاری نتیجے کے مطابق آزاد امیدوار امیر محمد خان 6 ہزار 551 ووٹ لے کر اس نشست پر دوسرے نمبر پر رہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق خیبرپختونخواہ میں قبائلی اضلاع میں انتخابات کے نتائج آنے کا سلسلہ جاری ہے۔ اس سلسلے میں پی کے 106 خیبر کا غیر حتمی غیر سرکاری نتیجہ سامنے آگیا ہے۔

(جاری ہے)

پی کے 106 خیبر کے تمام پولنگ اسٹیشنز کے غیر سرکاری غیر حتمی نتائج مرتب کر لیے گئے ہیں۔ نتائج کے مطابق آزاد امیدوار بلال آفریدی 12 ہزار800 ووٹ حاصل کرکے فاتح قرار پائے ہیں جبکہ آزاد امیدوار امیر محمد خان 6 ہزار 551 ووٹ لے کر اس نشست پر دوسرے نمبر پر رہے ہیں۔

وسری جانب اب تک موصول ہونے والے مزید غیر سرکاری غیر حتمی نتائج کے مطابق آزاد امیدوراوں نے 8 نشستوں پر برتری حاصل کر رکھی ہے۔ جبکہ تحریک انصاف کو 3 اور جماعت اسلامی، جے یو آئی ف کو 2،2 نشستوں پر برتری حاصل ہے۔ بتایا گیا ہے کہ تمام 16 صوبائی نشستوں کے حتمی نتائج کا اعلان کل کیا جائے گا۔ قبائلی اضلاع میں انتخابات کے حوالے سے ترجمان الیکشن کمیشن ندیم قاسم کا کہنا ہے کہ پولنگ اسٹیشن میں سی سی ٹی وی کیمرے نصب کیے گئے، سکیورٹی کے بہترین انتظامات کیے گئے۔

انہوں نے کہا کہ واٹس ایپ کے ذریعے الیکشن نتائج موصول ہوں گے، الیکشن نتائج کل دن کے وقت مکمل ہوسکیں گے۔وقت دیا جائے تو تمام معاملات کو بہتر انداز میں سلجھا سکتے ہیں۔ ندیم قاسم نے کہا کہ الیکشن نتائج کے بعد یہ روایت قائم ہونی چاہیے کہ جو ہار گیا ہے، اس کو ہار تسلیم کرنی چاہیے اور جیتنے والے کو مبارکباد دینی چاہیے۔ واضح رہے سات قبائلی اضلاع میں صوبائی اسمبلی کی 16 جنرل نشستوں پر پہلی بار انتخابات ہو رہے ہیں۔

قبائلی علاقوں کو صوبہ خیبرپختونخواہ میں ضم کیے جانے کے بعد ان علاقوں میں پہلی مرتبہ صوبائی نشستیں ترتیب دی گئیں، اور اب ان نشستوں پر پہلی مرتبہانتخابات کروائے جا رہے ہیں۔ جبکہ یہ بھی واضح رہے کہ اس وقت خیبرپختونخواہ کی کل 124 نشستوں میں سے تحریک انصاف کے پاس 85 نشستیں موجود ہیں۔ جبکہ قبائلی علاقوں کی نشستیں شامل کرکے خیبرپختونخواہ اسمبلی کی کل نشستیں 140 ہو جائیں گی۔
ڈیجیٹل پاکستان کی بنیاد سے متعلق تازہ ترین معلومات