ملتان میں مقدمہ ہارنے پر موکل نے وکیل کو قتل کر دیا

مقدمہ ہارنے کے دکھ میں اپنے 3 ساتھیوں سمیت وکیل صابر قریشی اور ان کے بھائی کو گھر میں گھس کر بیہمانہ تشدد کر کے قتل کر دیا، مرکزی ملزم گرفتار

Shehryar Abbasi شہریار عباسی بدھ جنوری 22:23

ملتان میں مقدمہ ہارنے پر  موکل نے وکیل کو قتل کر دیا
ملتان (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 13 جنوری2021ء) ملتان میں ایک نوجوان نے مقدمہ ہارنے کے دکھ میں وکیل اور اس کے بھائی کو قتل کردیا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق ملتان میں فیضان نامی موکل نے مقدمہ ہارنے کے دکھ میں اپنے 3 ساتھیوں سمیت وکیل صابر قریشی اور ان کے بھائی کو گھر میں گھس کر بیہمانہ تشدد کر کے قتل کر دیا ہے۔ اس حوالے سے مقامی پولیس کا کہنا ہے کہ مقتول صابر قریشی سینئر وکیل تھے جنہیں ملزم نے کیس ہارنے کے دکھ میں قتل کیا اور اس قتل کو ڈکیتی کی واردات کا رنگ دینے کی کوشش کی۔

(جاری ہے)

پولیس کے مطابق ملزمان نے گھر میں گھس کر تشدد کیا اور قیمتی سامان لوٹنے کے بعد لاشوں کو تیل چھڑک کر آگ لگانے کی کوشش کی مگر وہ اس کو یہ رنگ دینے میں کامیاب نہ ہوسکا۔ ایس ایس پی انوسٹیگیشن عامر نیازی نے بتایا کہ پولیس کی تحقیقاتی ٹیم نے 4 روز کی تفتیش کے بعد مرکزی ملزم فیضان کو گرفتار کر لیا ہے اب اس کی مدد سے باقی معاونین کو بھی گرفتار کر لیا جائے گا۔ واضح رہے کہ ملزم فیضان نے کیس ہارنے کے بعد وکیل صابر قریشی سے بدلہ لینے کے لیے ان کے گھر پر حملہ کیا، جہاں وکیل اور اس کے بھائی کو قتل کردیا ۔