اسرائیلی فوج کی ریاستی دہشت گردی میں دو فلسطینی نوجوان شہید

فلسطینیوں پر گولی اس وقت چلائی گئی جب وہ ایک فدائی حملے کی تیاری کررہے تھے،صیہونی فوج کا الزام

اتوار مئی 15:15

اسرائیلی فوج کی ریاستی دہشت گردی میں دو فلسطینی نوجوان شہید
جنین(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 09 مئی2021ء) قابض صہیونی فوج نے مقبوضہ مغربی کنارے کے شمالی شہر نابلس میں فائرنگ کرکے دو فلسطینی نوجوانوں کو شہید کردیا۔ قابض فوج نے دعوی کیا ہے کہ فلسطینیوں پر گولی اس وقت چلائی گئی جب وہ ایک فدائی حملے کی تیاری کررہے تھے۔میڈیارپورٹس کے مطابق تین فلسطینی بندوق برداروںنے سالم چوکی پر حملے کی کوشش کی جس کے جواب میں اسرائیلی فوج نے فائرنگ کرکے دو فلسطینیوں کو شہید اور تیسرے کو زخمی کردیا۔

(جاری ہے)

جنین کے قریب سالم چوکی پر اسرائیلی فوجیوں کی فائرنگ سے دو فلسطینی شہید ہوگئے۔تین فلسطینیوں نے کارلو بندوق سے فوجی چوکی پرحملہ کرنے کی کوشش کی مگر اسرائیلی فوجیوں نے ان پر فائرنگ کردی۔ غرب اردن میں اس نوعیت کا یہ کئی سال کے بعد پہلا کیس ہے جو غزہ کی پٹی میں پیش آنے والے مزاحمتی حملوں کے مشابہ ہے۔مقامی ذرائع کے مطابق اسرائیلی فوجیوں نے ہلال احمر کے فلسطینی طبی عملے کو شہید اور زخمی ہونے والے نوجوانوں کے قریب جانے کی اجازت نہیں دی۔

متعلقہ عنوان :