Do Afeemi

دو افیمی

دو افیمی کسی مسجد کے پاس سے گزرے۔ ایک نے کہا۔ ”یار! اللہ کا گھر دھوپ میں پڑا ہے۔ آوٴ اسے چھاوٴں میں کر دیں۔“ دونوں افمیی مل کر زور لگانے لگے۔ حتیٰ کہ شام ہو گئی اور سورج غروب ہو گیا۔ دونوں افیمی بہت خوش ہوئے اور ایک دوسرے سے کہنے لگے۔ ”یار! آج تو ہم نے ایک نیکی کا کام کیا ہے کہ مسجد کو دھوپ میں سے اٹھا کر چھاوٴں میں کر دیا ہے۔“

Your Thoughts and Comments