33کروڑ صارفین احتیاطاًاپنے پاس ورڈز تبدیل کریں،ٹوئٹر انتظامیہ کی ہدایت

کہ اندرونی تحقیقات سے پاس ورڈز کے چوری یا غلط استعمال کے کوئی شواہد نہیں ملے تاہم احتیاط ضروری ہے،بیان

جمعہ مئی 12:58

نیویارک(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 04 مئی2018ء) سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر نے اپنے اندرونی نظام میں خرابی سامنے آنے کے بعد 33 کروڑ صارفین کو اپنے پاس ورڈز تبدیل کرنے کی ہدایت کی ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق ٹوئٹر کا کہنا تھا کہ اندرونی تحقیقات سے پاس ورڈز کے چوری یا غلط استعمال کے کوئی شواہد نہیں ملے۔

(جاری ہے)

تاہم اس نے پھر بھی صارفین کو حفظ ماتقدم کے طور پر پاس ورڈز تبدیل کرنے کی ہدایت جاری کی ہے۔۔ٹوئٹر نے یہ نہیں بتایا کہ کتنے پاس ورڈز متاثر ہوئے ہیں۔یہ خیال ہے کہ یہ تعداد اچھی خاصی ہے اور وہ کئی ماہ سے نشانے پر تھے۔اس بارے میں معلومات رکھنے والے ایک فرد نے بتایا کہ ٹوئٹر نے اس بگ کے بارے چند ہفتے پہلے کھوج لگایا تھا اور اس سے حوالے سے ریگولیٹرز کو مطلع کیا گیا۔

متعلقہ عنوان :