سی پیک طویل المدت منصوبہ ہے جس سے معاشی انقلاب برپا ہو گا ،مشاہد حسین سید

سابق وزیر اعظم نے تحفظات کے باوجودقانون کی پاسداری کرتے ہوئے عدالتی فیصلوں پر عمل کیا، آئندہ عام انتخابات مقررہ وقت پر ہوں گے، چیئرمین سی پیک پارلیمانی کمیٹی

پیر مئی 16:10

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 14 مئی2018ء) چین پاکستان اقتصادی راہداری ((سی پیک)) بارے پارلیمانی کمیٹی کے چیئرمین مشاہد حسین سید نے کہا ہے کہ سی پیک ایک میگا قومی منصوبہ ہے جو اس ملک اور عوام کی تقدیر بدل کر رکھ دے گا۔ اپنے ایک انٹرویو میں انھوں کہا کہ سی پیک ایک طویل المدت منصوبہ ہے، جوملک میں معاشی انقلاب برپا کرے گا۔ سی پیک کے تحت صنعتی زونز،سڑکیں،موٹر ویز ، انفراسٹرکچر اور توانائی کے منصوبوں کا اجرائ کیا گیا۔

انھوں نے کہا کہ تھر کول کے پاور پلانٹ ماضی کی تمام حکومتوں کا خواب رہا ہے لیکن پاکستان مسلم لیگ(ن)کی حکومت نے اس منصوبے سے بجلی کی پیداوار کے لئے عملی اقدامات اٹھائے۔۔۔مشاہد حسین سید نے کہا کہ تعلیم،،، صحت، ٹیکنالوجی،،، ثقافت ،سیاحت اور ذراعت سمیت تمام شعبوں کو ترجیح دی گئی ہے۔

(جاری ہے)

انھوں نے کہا کہ جنوب ایشیائی ممالک سی پیک اور گوادر بندر گاہ سے استفادہ کے لئے منصوبے پر نظریں جمائے ہوئے ہیں۔

انھوں نے کہا کہ پارلیمانی کمیٹی سی پیک کے حوالے سے صوبوں کے تمام تحفظات دور کر دیئے ہیںاور اس منصوبے سے ملک کے تمام علاقوں کو یکساں فوائد اور مواقع میسر آئیں گے۔ایک سوال کے جواب میں مشاہد حسین سید نے کہا کہ سابق وزیر اعظم محمد نواز شریف ایک مقبول قائد ہیں جو انتہائی تحمل سے مقدمات کا سامنا کر رہے ہیں۔سینیٹر مشاہد حسین سید نے کہا کہ سابق وزیر اعظم نے تحفظات کے باوجودقانون کی پاسداری کرتے ہوئے عدالتی فیصلوں پر عمل کیا اور جے آئی ٹی کے ساتھ مکمل تعاون کیا اور تمام فیصلوں پر ملک کے بہترین مفاد میں عمل کیا ہے۔

سابق وزیر اعظم کے بڑے بڑے اجتماعات کے ذریعے اپنے بیانیہ کو قوم کے سامنے رکھا ہے جسے عوام میں مقبولیت ملی ہے۔ایک سوال کے جواب میں انھوں نے کہا کہ آئندہ عام انتخابات مقررہ وقت پر ہوں گی