مجلس وحدت مسلمین پاکستان کو انتخابی نشان خیمہ الاٹ کر دیا گیا

بدھ مئی 20:00

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کو انتخابی نشان خیمہ الاٹ کر دیا گیاہے ،،ملک بھر سے ایم ڈبلیو ایم کے پلیٹ فارم سے امیدوار کھڑے کئے جائیں گے،دیگر سیاسی جماعتوں کے ساتھ اتحاد کا فیصلہ مشاورت کے ساتھ کیا جائے گا۔۔ممبر پولیٹیکل ایگزیکٹو کونسل ایم ڈبلیوایم سید شہریارمحسن نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ایم ڈبلیو ایم کی طرف سے الیکشن کمیشن کو انتخابی نشان’’خیمہ‘‘ کے لیے درخواست دے رکھی تھی جسے منظور کر لیا گیا۔

مجلس وحدت مسلمین خیمے کے انتخابی نشان کے ساتھ ملک بھر سے اپنے امیدوار کھڑے کرے گی۔ ہم ملک میں دیانت دار اور تعلیم یافتہ قیادت کی خواہاں ہیں انہوں نے کہاکہ موروثی سیاست نے وطن عزیز میں شخصیت پرستی کی راہ ہموار کی جس سے ملک کو نقصان پہنچا۔

(جاری ہے)

ایم ڈبلیوایم پولیٹیکل کونسل اپنے امیدوران کی نامزدگیا جلدمکمل کر لے گی ہم ملک میں شفاف انتخابات کے خواہشمند ہیں جسکے لئے ضروری ہے کہ الیکشن کمیشن کے اختیارت میں اضافہ کیاجائے انتخابی الائنس کے سوال کے جوا ب میں ان کا کہنا تھا ہم نے ابھی تک کسی بھی جماعت سے سیاسی اتحاد کا ابھی تک فیصلہ نہیں کیاتاہم مجلس وحدت مسلمین کی اعلی قیادت سے ملک کی مختلف مذہبی و سیاسی جماعتیں رابطے میں ہیںمرکزی شوری کونسل انتخابی اتحاد کے معاملات کو بغور دیکھ رہی ہے کسی بھی اتحاد کا فیصلہ اعلی سطح گفت و شنید اورباہمی مشاورت کے بعد کیا جائے گا انہوں نے جسٹس ناصر الملک کا بطور نگران وزیر اعظم انتخاب کو درست قرار دیتے ہوئے کہاکہ جسٹس ناصر الملک اس منصب کے لئے مناسب فرد ہیں۔

اعجاز خان