ْپشاور،تحریک انصاف کے سابقہ ایم پی اے سے انکی جائیدادواگزارکرائی جائے،مورچی خیل آفریدی

حیات آبادفیزون بلال مارکیٹ میں واقع پلازہ تین کروڑپچاس لاکھ روپے میں ایک خاتون سے خریدا،جس میں سے پچاس لاکھ ایڈوانس ادائیگی کی گئی تاہم اس دوران عاصم نامی شخص جوخودکوپلازے کاقانونی دعویدارکہتاتھاہم سے پچاس لاکھ روپے لے کرقبضہ دیا لیکن جب ہم پلازہ پرتعمیراتی کام شرو ع کرنے لگے توعاصم کابھائی جوکہ پی ٹی آئی سے تعلق رکھتاہے ہمارے پیسے ہڑپ کرنے کیلئے عدالتی سٹے آرڈرہونے کے باوجودحیات آبادپولیس کے ساتھ مل کرہمیں قبضہ گروپ بنادیا یونیورسٹی روڈکے رہائشی کی پریس کانفرنس میں عمران خان سے خریدے گئے پلازہ کا قبضہ دلوانے کی اپیل

جمعرات جون 21:31

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 21 جون2018ء) یونیورسٹی روڈکے رہائشی مورچی خیل آفریدی نے چیئرمین پاکستان تحریک انصاف سے اپیل کی ہے کہ انکے پارٹی سے تعلق رکھنے والے سابقہ ایم پی اے سے انکی جائیدادواگزارکرائی جائے ۔پشاورپریس کلب میں اپنے رشتہ دارغلام مصطفی کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے ان کاکہناتھاکہ انہوںنے حیات آبادفیزون بلال مارکیٹ میں واقع پلازہ تین کروڑپچاس لاکھ روپے میں ایک خاتون سے خریداجس میں سے پچاس لاکھ ایڈوانس ادائیگی کی گئی تاہم اس دوران عاصم نامی شخص جوخودکوپلازے کاقانونی دعویدارکہتاتھاہم سے پچاس لاکھ روپے لے کرقبضہ دیالیکن جب ہم پلازہ پرتعمیراتی کام شرو ع کرنے لگے توعاصم کابھائی جوکہ پی ٹی آئی سے تعلق رکھتاہے ہمارے پیسے ہڑپ کرنے کیلئے عدالتی سٹے آرڈرہونے کے باوجودحیات آبادپولیس کے ساتھ مل کرہمیں قبضہ گروپ بنادیااورپولیس کے ہاتھوں گرفتارکرالیالیکن حقائق سامنے آنے کے بعدہمیں رہاکردیاگیااورانہوںنے مذکورہ پلازہ پرقبضہ کرنے کی غرض سے زرعی ترقیاتی بینک کوکرایہ پرچڑہادیاجس پرہم نے عدالت کونوٹس بھی دیالیکن کوئی شنوائی نہیں ہوئی ۔

(جاری ہے)

انہوں نے الزام لگایاکہ سابقہ ایم پی اے جن کاتعلق اب پی ٹی آئی سے اپنی سیاسی واثرورسوخ کااستعمال کرکے پلازے پرناجائزقابض ہے اورہمیں اپنی رقم بھی واپس کرنے میں بھی ٹال مٹول سے کام لے رہاہے ۔انہوںنے پی ٹی آئی چیئرمین ، چیف جسٹس آف پاکستان،، کورکمانڈر خیبرپختونخوا،، آئی جی پولیس خیبرپختونخوا ، چیرمین پی ٹی آئی عمران خان اور دیگر متعلقہ حکام سے اپیل کی کہ وہ مذکورہ ایم پی اے اوردیگرافرادسے ہماری جائیدادواگزارکرائے ۔