بکری پال حضرات محکمہ کے ماہرین کی مشاورت سے اعلیٰ پیداواری اوصا ف کی حامل علاقائی نسل کی بکریاں پالنے کو ترجیح دیں، ماہرین لائیو سٹاک و ڈیر ی ڈویلپمنٹ

بدھ ستمبر 15:30

فیصل آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 23 ستمبر2020ء) ڈویژنل ڈائریکٹر لائیو سٹاک و ڈیر ی ڈویلپمنٹ ڈاکٹر محمود اختر نے کہا کہ بکری پال حضرات کو چاہیے کہ وہ محکمہ کے ماہرین کی مشاورت سے اعلیٰ پیداواری اوصا ف کی حامل علاقائی نسل کی بکریاں پالنے کو ترجیح دیں تاکہ زیادہ سے زیادہ بچوں کی پیدائش کی صلاحیت کی حامل یہ بکریاں اپنی نسل میں بھر پور اضافہ کا باعث بنتے ہوئے دودھ و گوشت کی پیداوار کو بڑھانے میں بھی معاون ہو سکیں۔

انہوںنے کہاکہ احتیاطی ، حفاظتی و پیشگی تدارکی اقدامات کے تحت بکریوں کے باڑے میں خوردنی نمک کے ڈھیلے ضرور کھرلیوں میں رکھے جائیں تاکہ بکریاں موسمی و متعدی امراض سے محفوظ رہ سکیں۔انہوںنے کہاکہ بکری پال حضرات بکریوں کو کرم کش ادویات پلانے میں بھی کسی غفلت یا تساہل سے کام نہ لیں کیونکہ موسمی امراض بکریوں کیلئے انتہائی نقصان دہ ثابت ہو سکتے ہیں۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ بھیڑیں و بکریاں پالنے والے لائیو سٹاک فارمرز، مویشی پال حضرات حاملہ بکریوں کو آخری ماہ ریوڑ سے الگ کرکے زود ہضم خوراک اور کرم کش ادویات کی فراہمی سمیت اس ضمن میں کسی غفلت کا مظاہرہ نہ کریں تاکہ بکریوں کی افزائش نسل میںبھر پور مددمل سکے۔ انہوںنے کہاکہ فیصل آباد ڈویژن کے چاروں اضلاع فیصل آباد ، جھنگ ،ٹوبہ ٹیک سنگھ ، چنیوٹ بھر میں قائم لائیو سٹاک ہسپتالوں ، ویٹرنر ی ڈسپنسریوں اور دیگر لائیو سٹاک مراکز پر بھیڑوں ، بکروں اور مویشیوں کو مختلف متعدی و موسمی امراض سے بچانے کیلئے حفاظتی ٹیکے وافر مقدار میں دستیاب ہیں لہٰذا جانوروں کو بروقت حفاظتی ٹیکے لگوانے کا عمل بھی یقینی بنایاجائے۔

متعلقہ عنوان :