غیر قانونی بھرتیوں پر سابق ایم ڈی پی آئی اے اعجاز ہارون گرفتار

ایف آئی اے کی طرف سے کراچی میں کارروائی کے دوران پی آئی اے کے سابق ڈائریکٹر ایچ آر حنیف پٹھان کو بھی حراست میں لے لیا گیا ، ملزمان پر ڈپٹی ایم ڈی سالم سیانی کو غیرقانونی طور پر بھرتی کرنے کا الزام ہے ، ترجمان ایف آئی اے

Sajid Ali ساجد علی ہفتہ اکتوبر 13:59

غیر قانونی بھرتیوں پر سابق ایم ڈی پی آئی اے اعجاز ہارون گرفتار
کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 17 اکتوبر2020ء) غیر قانونی تعیناتیوں پر سابق ایم ڈی قومی ایئرلائن اعجاز ہارون کو گرفتار کر لیا گیا۔ بتایا گیا ہے کہ فیڈرل انویسٹی گیشن ایجنسی کی طرف سے کراچی میں کارروائی کے دوران گرفتاری عمل میں لائی گئی۔ ترجمان ایف آئی اے کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ اعجاز ہارون پر ڈپٹی ایم ڈی سالم سیانی کو غیرقانونی طور پر بھرتی کرنے کا الزام ہے ، جب کہ اسی الزام کے تحت ان کے ساتھ ساتھ پی آئی اے کے سابق ڈائریکٹر ایچ آر حنیف پٹھان کو بھی حراست میں لے لیا گیا ، کیوں کہ سالم سیانی کو پی آئی اے کے 2009 کے ایچ آر قوانین کے خلاف جاتے ہوئے بھرتی کیا گیا اور سالم سیانی کو 20 ہزار ڈالر تنخواہ اور دیگر مراعات بھی دی گئیں۔

دوسری طرف قومی ایئر لائن کے موجودہ چیف ایگزیکٹو آفیسر ارشد ملک نے تنخواہ اور مراعات میں اضافہ لینے سے انکار کردیا، پی آئی اے بورڈ نے سی ای او کی ماہانہ تنخواہ 18 لاکھ روپے کردی تھی ۔

(جاری ہے)

تفصیلات کے مطابق پی آئی اے کے سی ای اوارشد ملک نے کہا ہے کہ کورونا کے باعث دنیا بھر کی ایئر لائنز خسارے کا شکار ہیں ، جب کہ عالمی وبا کی وجہ سے دُنیا بھر کی ائیر لائنز کے 80 فیصد آپریشن بند ہیں ،اور قومی ائیر لائن بھی بحران کا شکار ہے ،ایسی صورتحال میں تنخواہ اور مراعات میں اضافہ قابل قبول نہیں، اس لیے رضاکارانہ طور پر وہی تنخواہ وصول کروں گا جو فضائیہ سے ڈیپوٹیشن کے موقع پر تھی۔

واضح رہے کہ قومی ایئر لائن کے بارے میں وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ کورونا کے باعث دنیا بھر کی ایئرلائنز کونقصان لیکن پی آئی اے کو فائدہ ہوا ، 2019ء میں پی آئی اے نے 7.8ارب روپے منافع کمایا ، جب کہ 2018ء میں 19.8ارب کا نقصان ہوا،پی آئی اے بہتری کی جانب گامزن ہے ، وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس ہوا، جس میں 15 نکاتی ایجنڈے پر غور کیا گیا ، اجلاس میں ملک کی سیاسی ، سلامتی اور معاشی صورتحال کا جائزہ لیا گیا ، جہاں وزیراعظم عمران خان نے چیف ایگزیکٹو قومی ایئرلائن کی تعریف کی اور کہا کہ پی آئی اے بہتری کی جانب گامزن ہے ، کورونا کے باعث دنیا بھر کی ایئرلائنز نقصان میں گئیں، لیکن پی آئی اے اصلاحات کے باعث فائدے میں رہی ، وزیراعظم کی جانب سے پی آئی اے کی ری اسٹرکچرنگ کا عمل جلد مکمل کرنے کی ہدایت کی گئی۔