اسرائیلی فوج کی غزہ کی سمندری حدود میں فلسطینی کشتی پر فائرنگ

اسرائیلی فوج نے وسطی غزہ میں سمندری حدود میں ایک فلسطینی ماہی گیر کشتی پر دو گولے داغے،ذرائع

منگل فروری 14:08

غزہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 23 فروری2021ء) قابض صہیونی فوج نے گذشتہ روز غزہ کی پٹی کی سمندری حدود میں فلسطینی ماہی گیروں کی ایک کشتی پر فائرنگ کی جس کے نتیجے میں کشتی کو نقصان پہنچا تاہم کسی قسم کے جانی نقصان کی تصدیق نہیں ہوسکی۔

(جاری ہے)

میڈیارپورٹس کے مطابق فلسطینی ماہی گیر یونین کے رابطہ کار زکریا بکر نے بتایا کہ اسرائیلی فوجی کشتی کی طرف سے وسطی غزہ میں سمندری حدود میں ایک فلسطینی ماہی گیر کشتی پر دو گولے داغے۔

ان کا کہنا تھا کہ اسرائیلی فوج کی فائرنگ اور گولہ باری سے کشتی کو نقصان پہنچا تاہم اس پر سوار ماہی گیر محفوظ رہے۔ادھر اسرائیلی فوج کے مطابق غزہ کی پٹی کے ساحل کے قریب ایک فلسطینی کشتی کو جو کہ سیکیورٹی خطرہ بننے والی تھی کو نشانہ بنایا گیا ہے۔اسرائیلی فوج کے ترجمان کے مطابق فوج نے غزہ کی پٹی کی سمندری حدود میں ایک فلسطینی کشتی کو اس وقت نشانہ بنایا گیا جب وہ آگے بڑھنے کی کوشش کررہی تھی۔

متعلقہ عنوان :