Africa Bare Ju Ap Nahi Jante - Article No. 1671

افریقہ بارے جو آپ نہیں جانتے

رقبے کے لحاظ سے افریقہ دنیا کا دوسرا سب سے بڑا براعظم ہے ۔

منگل 25 فروری 2020

Africa Bare Ju Ap Nahi Jante
وردہ بلوچ
رقبے کے لحاظ سے افریقہ دنیا کا دوسرا سب سے بڑا براعظم ہے ۔یہ خشکی کا 22فیصد اور کل سطح زمین کا چھ فیصد بنتاہے۔
افریقہ آبادی کے لحاظ سے دنیا کا دوسرا بڑا براعظم ہے ۔دنیا کی 16فیصد آبادی اس میں رہتی ہے ۔
سب سے زیادہ آبادی براعظم ایشیاء میں ہے ،جس میں دنیا کے تقریباً59انسان بستے ہیں۔
دنیا کا سب سے غریب اور پسماندہ براعظم افریقہ ہے۔
اس براعظم کی نصف آبادی کی عمر 25سال سے کم ہے ۔
دنیا میں ملیریا کے 90فیصد کیسز افریقہ میں ہوتے ہیں۔

دنیا کی نسبت افریقہ میں جنگلات کا کٹاو دُگنا ہے ۔
افریقہ میں پرندوں کی کل انواع کا 25فیصد رہتاہے۔
ایک ہزار سے زائد زبانیں اس براعظم میں بولی جاتی ہیں۔ بعض ماہرین کے مطابق افریقہ میں کل دوہزار کے قریب زبانیں بولی جاتی ہیں۔

(جاری ہے)

سارے افریقہ 1881ء سے 1914ء کے دوران نو آبادی بنایا گیا،سوائے ایتھوپیا اور لائبیریا کے ۔یہ دور ”Scramble Africa For“کہا جاتاہے اور یہ نو سامراجیت کا عہد تھا۔
افریقہ میں 54خود مختار ملک ہیں جو کسی دوسرے براعظم سے زیادہ ہیں۔

دنیا میں تازہ پانی کی دوسری سب سے بڑی جھیل افریقہ میں ہے ۔اس کا نام جھیل وکٹوریا ہے ۔
افریقی ملک مصر میں سالانہ سب سے زیادہ سیاح جاتے ہیں۔ سال بھر میں ایک کروڑ کے قریب سیاح اس کا دورہ کرتے ہیں ۔
دنیا کے تیز ترین پانچ جانوروں میں سے چار کا تعلق افریقہ سے ہے :چیتا ،وائلڈ بیسٹ ،شیر اور تھامسنز غزال۔
یہ تمام جانور50میل فی گھنٹہ کی رفتار سے زیادہ تیز بھاگ سکتے ہیں۔چیتے کی رفتار 70میل فی گھنٹہ تک پہنچ جاتی ہے۔چارلس ڈارون نے سب سے پہلے خیال پیش کیا کہ جدید انسان سب سے پہلے افریقہ میں رہتا تھا،لیکن مغربی دنیا میں سیاہ فاموں کے بارے میں تعصب کی وجہ سے اسے بہت سے لوگوں نے تسلیم نہ کیا۔

افریقی ملک ایتھوپیا میں 32لاکھ برس قدیم ایک انسان کی باقیات مل چکی ہیں ۔اس کا نام ”لوسی “رکھا گیا۔
زیادہ تر ماہرین لسانیات کا ماننا ہے کہ لفظ ”افریقہ “،”افری“سے اخذ ہواہے۔یہ شمالی افریقہ میں قرطاجیہ کے قریب تیسری صدی قبل مسیح میں رہنے والے لوگوں کو کہا جاتا تھا۔
اس میں ”قہ ca“ کا اضافہ رومی ہے جس کا مطلب ”ملک“یا”زمین“ہے۔
افریقہ کا سب سے بڑا مذہب اسلام ہے اور اس کے بعد عیسائیت ہے ۔افریقہ کی 85فیصد آبادی کا تعلق ان دو مذاہب سے ہے۔
افریقہ کا مہلک ترین جانور ”ہپو“ہے۔

دوسری عالمی جنگ کے بعد سب سے زیادہ جانی نقصان دوسری جنگ کانگو (2003-1998ء) میں ہوا جس میں 54لاکھ افراد مارے گئے۔
ریاست ہائے متحدہ امریکا،چین،انڈیا،نیوزی لینڈ،ارجنٹائن اور یورپ افریقہ میں سما سکتے ہیں۔
دنیا میں نکالا گیا نصف سونا افریقی ملک جنوبی افریقہ سے نکلا۔

صحارا سب سے بڑا گرم صحرا ہے ۔یہ امریکا سے بڑا ہے۔
قدیم مصری شہر کنعان دنیا کا پہلا منصوبہ بند شہر تھا۔
دنیا کا سب سے بڑا رینگنے والا جانور (رپٹائل)نیل کا مگر مچھ افریقہ میں رہتاہے۔

مزید اخلاقی کہانیاں

Khawahish Ka Anjaam

خواہش کا انجام

Khawahish Ka Anjaam

Phans Giya Kanjoos

پھنس گیا کنجوس

Phans Giya Kanjoos

Pari Ka Bhai - 2nd Qist

پری کا بھائی (دوسری قسط)

Pari Ka Bhai - 2nd Qist

Hathi Aur Bandar Main Ho Gayi Larai

ہاتھی اور بندر میں ہوگئی لڑائی

Hathi Aur Bandar Main Ho Gayi Larai

Sadiq Ka Roza

صادق کا روزہ

Sadiq Ka Roza

Dilchasp O Ajeeb

دلچسپ و عجیب

Dilchasp O Ajeeb

Bhalu Ka Badla

بھالو کا بدلہ

Bhalu Ka Badla

گیا وقت پھر ہاتھ نہیں‌ آتا

Gaya Waqt Phir Haath Nehin Aata

Mehnat Ka Samar

محنت کا ثمر

Mehnat Ka Samar

Acha Pakistan

اچھا پاکستان

Acha Pakistan

Bale Ka Ghora

بالے کا گھوڑا۔ تحریر: مختار احمد

Bale Ka Ghora

Koyle

کوئل

Koyle

Your Thoughts and Comments