ہنڈاموٹر سائیکل کی قیمتوں میں ایک بار پھر بڑا اضافہ کر دیا گیا

موٹر سائیکل کی قیمت میں اضافہ سیلز ٹیکس لگنے کی وجہ سے ہوا۔ن سترہ فیصد سیلز ٹیکس سے 15ہزار روپے سے لیکر 44ہزار 500روپے تک اضافہ ہوا

Danish Ahmad Ansari دانش احمد انصاری جمعہ 28 جنوری 2022 06:32

ہنڈاموٹر سائیکل کی قیمتوں میں ایک بار پھر بڑا اضافہ کر دیا گیا
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین ۔ 28جنوری2022ء) غریب کی سواری بھی غریب کی پہنچ سے دور ہو گئی، ہنڈاموٹر سائیکل کی قیمتوں میں ایک بار پھر بڑا اضافہ کر دیا گیا- تفصیلات کے مطابق سستی سواری اور مہنگی کر دی گئی موٹر سائیکل کی قیمتوں میں اضافہ کر دیا گیا،ان موٹر سائیکل کی قیمت میں اضافہ سیلز ٹیکس لگنے کی وجہ سے ہوا۔ن سترہ فیصد سیلز ٹیکس سے 15ہزار روپے سے لیکر 44ہزار 500روپے تک اضافہ ہوا،ن شہری قیمت میں اضافے سے شدید پریشان ہیں۔

ہنڈا کی موٹر سائیکل ایک بار پھر مہنگی ہو گئی،ن سترہ فیصد سیلز ٹیکس لگنے کے بعد سی ڈی 70موٹر سائیکل 97ہزار 800 روپے، سی ڈی ڈریم ایک لاکھ 4500ن روپے، پرائڈر ایک لاکھ 33،500روپے ہو گئی۔ ن سی جی 125 سی سی ایک لاکھ 56ہزار 900روپے کی ہوگئی جبکہ سی جی 125ایس ایک لاکھ 88ہزار کی ہوگئی۔

(جاری ہے)

موٹر سائیکلیں مہنگی ہونی کی وجہ سے شہری حکومت کے خلاف پھٹ پڑے کہتے ہیں کہ حکومت مہنگائی کنٹرول نہیں کر پا رہی اب تو سائیکل پر ہی آنا پڑے گا۔

موٹر سائیکل کی قیمتوں میں اضافے کے بعد کاروبار کرنے والے حضرات بھی پریشان ہیں، ان کا کہنا ہے کہ وزیراعظم نے مہنگائی کنٹرول کرنے کے وعدے کیے مگر کچھ نہ ہو سکا، گروپ لیڈر الیکٹرونکس اینڈ انسٹالمنٹ ایسویس ایشن رانا سکندراعظم خاں بھی موٹر سائیکل کی قیمت میں اضافے پر بول پڑے کہتے ہیں کاروبار مزید متاثر ہوں گے۔ موٹر سائیکل غریب کی سواری ہے جو دن بدن مہنگی ہوتی جا رہی ہے شہری حکومت سے مہنگائی کنٹرول کرنے کا مطالبہ کر رہے ہیں۔

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments