ترقیاتی منصوبوں پر عملدرآمد اور فنڈز کے اجراء کو بروقت یقینی بنایا جائے ،وزیراعلی بلوچستان

منصوبوں کی مانیٹرنگ اور ان پر عملدرآمد کے لیے ڈویڑنل کمیٹیوں کو مزید مستحکم اور فعال کیا جائے،جام کمال خان

منگل 27 جولائی 2021 23:16

ترقیاتی منصوبوں پر عملدرآمد اور فنڈز کے اجراء کو بروقت یقینی بنایا ..
کوئٹہ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 27 جولائی2021ء) وزیراعلی بلوچستان جام کمال خان نے ترقیاتی محکموں کو پی ایس ڈی پی میں شامل ترقیاتی اسکیمات کی مانیٹرنگ کے نظام کو بہتر بنانے، اسکیمات کی لائف لائن مقرر کرنے اور سہ ماہی جائزہ رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ترقیاتی منصوبوں پر عملدرآمد اور فنڈز کے اجراء کو بروقت یقینی بنایا جائے تاکہ ترقیاتی عمل کے ثمرات بروقت عوام تک پہنچ پائیں۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے گذشتہ مالی سال کی پی ایس ڈی پی میں شامل روڈ اور بلڈنگ سیکٹرز کے منصوبوں پر پیشرفت اور رواں مالی سال کی پی ایس ڈی پی میں بلڈنگ سیکٹر کی اسکیمات پر عملدرآمد کے آغاز سے متعلق امور کے جائزہ اجلاس کے دوران کیا۔ ایڈیشنل چیف سیکریٹری منصوبہ بندی وترقیات حافظ عبد الباسط، سیکریٹری خزانہ عبدالرحمان بزدار، وزیراعلی کے پرنسپل سیکرٹری زاہد سلیم، سیکریٹری بلڈنگ غلام علی بلوچ، سیکرٹری روڈز سلیم اعوان، سیکرٹری لوکل گورنمنٹ احمد رضا، سیکرٹری اطلاعات سہیل الرحمن بلوچ سیکرٹری ایس اینڈ جی اے ڈی معین الرحمن، سیکرٹری ایمپلیمنٹیشن عبداللہ خان اور دیگر متعلقہ حکام نے اجلاس میں شرکت کی، اجلاس میں وزیراعلی نے ہدایت کی کہ ترقیاتی منصوبوں کی منظوری کی کمیٹیوں پی ڈی ڈبلیو پی اور ڈی ایس سی کے اجلاس تواتر کے ساتھ منعقد کئے جائیں تاکہ نئے ترقیاتی منصوبوں کے بروقت آغاز اور ان پر تیز رفتار عملدرآمد کے ذریعہ وقت کی بچت اور مختص فنڈز کے بہترین استعمال کو یقینی بنایا جائے۔

(جاری ہے)

وزیراعلی نے ہدایت کی کہ منصوبوں کی مانیٹرنگ اور ان پر عملدرآمد کے لیے ڈویڑنل کمیٹیوں کو مزید مستحکم اور فعال کیا جائے۔ اس سے قبل اے سی ایس منصوبہ بندی و ترقیات نے اجلاس کو آگاہ کیا کہ مالی سال 22-2021 کے ترقیاتی پروگرام میں 3811 منصوبے شامل ہیں جن میں سے 2286 نئے اور1525 جاری منصوبے ہیں۔ اجلاس کو محکمہ بلڈنگ کی جانب سے بتایا گیا کہ ماڈل بورڈنگ اسکولز کی تعمیر کا ماسٹر پلان بنایا گیا ہے۔

15 ایکٹر پر مشتمل ان اسکولوں میں ہاسٹل، جمنازیم، گراؤنڈ، اسٹاف کے لیے رہائش سمیت دیگر سہولیات مہیا کی جائیں گی۔ اجلاس کو جی او آر طرز پر ڈسٹرکٹ ریذیڈینشل کمپلیکس کی تعمیر، روڈ سیکٹر میں نئے اور جاری ترقیاتی منصوبوں، 105 اور 77 ترجیحاتی منصوبوں پر بھی بریفنگ دی گئی۔وزیراعلیٰ نے اس موقع پر ہدایت کی کہ منصوبوں کی بروقت اور معیاری تکمیل کو ہرصورت یقینی بنایا جائے۔

متعلقہ عنوان :

کوئٹہ شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments