کاشتکاروں کو مسور کی بہتر پیداوار کیلئے فصل کو کیڑوں کے حملہ سے محفوظ رکھنے کی ہدایت

پیر اپریل 11:10

قصور۔16 اپریل(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 اپریل2018ء) زرعی ماہرین نے مسورکے کاشتکاروں کو ہدایت کی ہے کہ وہ اچھی پیداوار کے حصول کیلئے فصل کو نقصان رساں کیڑوں کے حملہ سے محفوظ رکھیں تاکہ انہیں بھرپور مالی فائدہ حاصل ہوسکے۔ زرعی ماہرین نے بتایاہے کہ ٹوکااگتی ہوئی مسورکی فصل کے چھوٹے پودوں کو کاٹ کر کھاتاہے جس سے پیداوار بری طرح متاثر ہوتی ہے۔

(جاری ہے)

انہوں نے بتایا کہ چورکیڑے کی سنڈیاں دن کے وقت پودوں کے قریب چھپی رہتی ہیں اور رات کو چھوٹے پودوں کو کاٹ کر فصل کانقصان کرتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ان کے انسداد کیلئے انسداد کیلئے ناقابل استعمال سبزیاں کاٹ کر شام کو ڈھیریوں کی صورت میں رکھ دی جائیں اور صبح ہوتے ہی ان ڈھیریوں کے نیچے چھپی ہوئی سنڈیوں کو تلف کردیاجائے‘ فصل کے اگنے سے کٹائی کے مرحلہ تک کسی بھی وقت دیمک کا حملہ ہوسکتاہے اور دیمک پودوں کی جڑوں پر حملہ آور ہوتے ہوئے زمین میں سرنگیں بنالیتی ہے جس سے متاثر ہ حملہ شدہ پودے سوکھ جاتے ہیں اگر بروقت آبپاشی کرلی جائے تو دیمک کے حملہ سے کسی حد تک بچاجاسکتاہے۔

متعلقہ عنوان :