فیصل آباد،ضلعی محکمہ صحت کی چھاپہ مارٹیموں کی عطائی ڈاکٹروں ‘ غیر قانونی میڈیکل کلینکس ‘ لیبارٹریز کے خلاف کارروائی

گزشتہ دو روز کے دوران غیر مستند ڈاکٹروں کے 50 کلینکس سیل کر دئیے گئے جبکہ 48 کے خلاف چالان پنجاب ہیلتھ کمیشن کو بھجوا دئیے

بدھ اپریل 22:52

فیصل آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 اپریل2018ء) حکومت پنجاب کی ہدایت پرضلعی محکمہ صحت کی چھاپہ مارٹیموں نے عطائی ڈاکٹروں ‘ غیر قانونی میڈیکل کلینکس ‘ لیبارٹریز کے خلاف کارروائی کرتے ہوئے گزشتہ دو روز کے دوران غیر مستند ڈاکٹروں کے 50 کلینکس سیل کر دئیے گئے جبکہ 48 کے خلاف چالان پنجاب ہیلتھ کمیشن کو بھجوا دئیے ۔ کارروائی کے دوران غیر قانونی طور پر کلینکس چلانے والے عطائی ڈاکٹروں کے خلاف متعلقہ تھانوں میں چھ ایف آئی آر درج کرائی گئیں اور دو کے خلاف ڈرگ ایکٹ کے تحت چالان کئے گئے ۔

ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ڈاکٹر آصف شہزاد نے بتایا کہ محکمہ صحت کی 13 ٹیمیں ضلع بھر میں سرگرم عمل ہیں اور سپریم کورٹ کے حکم کے مطابق عطائی ڈاکٹروں ‘ نیم حکیموں اور غیر قانونی طور پر میڈیکل کلینکس چلانے والوں کے خلاف اپریشن جاری رہے گا ۔

(جاری ہے)

انہوںنے کہا کہ مریضوں کی صحت سے کھیلنے والوں سے کوئی رعایت نہیں کی جائے گی ۔ دریں اثناء ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر تھری ڈاکٹر رائے قمر الزمان نے اپنی ٹیم کے ہمراہ کارروائی کرتے ہوئے گزشتہ روز مختلف علاقوں میں عطائی ڈاکٹروں کے آٹھ کلینکس سیل کر دئیے جن میں ریاض کلینک مسعود آباد ‘ الرحمان کلینک یاسر ٹائون سمندری روڈ ‘ سہیل کلینک چک نمبر 224 ر ب ‘ ٹیڈی کلینک آبادی وزیر خاں ‘مریم پولی کلینک ڈگرانوں روڈ ‘ رحمن لیبارٹری محمدی چوک وارث پورہ ‘ گڈلائف کلینک جیلانی ٹائون اور شہزاد ڈینٹل کیئر غلہ منڈی شامل ہے ۔