پاک سرزمین پارٹی کے سربراہ مصطفی کمال نے نئی مردم شماری کے نتائج کو سپریم کورٹ میں چیلنج کردیا

بدھ اپریل 15:11

پاک سرزمین پارٹی کے سربراہ مصطفی کمال نے نئی مردم شماری کے نتائج کو ..
کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 25 اپریل2018ء) پی ایس پی کے سربراہ مصطفی کمال نے نئی مردم شماری کے نتائج کو سپریم کورٹ میں چیلنج کر دیا ،درخواست گزار نے کہا کہ مردم شماری کا تھرڈ پارٹی آڈٹ کرایا جائے۔ بدھ کو مصطفی کمال نے سپریم کورٹ کراچی رجسٹری میں نئی مردم شماری کے نتائج کیخلاف درخواست جمع کروا دی گئی ہے۔درخواست میں لکھا گیا ہے کہ نادرا رکارڈ کے مطابق کراچی کی رجسٹرڈ آبادی دوکروڑ15لاکھ ہے۔

(جاری ہے)

درخواست گزارمصطفی کمال نے کہا مردم شماری میں نادرا سے بھی مدد نہیں لی گئی۔۔کراچی کی آبادی دانستہ کم ظاہر کرکے جانبداری کا مظاہرہ کیا گیا۔۔کراچی کے بیشتر علاقوں کو مردم شماری میں شمار ہی نہیں کیا گیا۔۔مردم شماری میں کراچی کی آبادی کو1کروڑ60 لاکھ ظاہر کیاگیا۔درخواست گزار نے کہا کہ مردم شماری کا تھرڈ پارٹی آڈٹ کرایا جائے،درخواست گزار ۔۔کراچی میں صوبائی اورقومی اسمبلی نشستوں میں اضافہ کیا جائے۔درخواست میں ادارہ شماریات،وفاقی حکومت،چیرمین نادرا اوردیگر کو فریق بنایا گیا ہے۔