خیبرپختونخوا کی پہلی خاتون ٹیکسی ڈرائیور کے قتل کا ڈراپ سین، شوہر قاتل نکلا

منگل مئی 14:03

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 01 مئی2018ء) صوبہ خیبر پختونخوا کی پہلی خاتون ٹیکسی ڈرائیور قرار دی جانے والی نبیلہ کے قتل کا ڈراپ سین ہوگیا اور خاتون کا دوسرا شوہر ہی ان کا قاتل نکلا۔

(جاری ہے)

نجی ٹیکسی کمپنی میں ملازمت کرنے والی نبیلہ کو گذشتے ہفتے 28 اپریل کو پشاور میں فائرنگ کرکے قتل کردیا گیا تھاجس کا مقدمہ خاتون کی بہن کی مدعیت میں درج کیا گیا تھا، جس کے بعد پولیس نے تحقیقات کا آغاز کیا ،ْپولیس نے خاتون کے قتل کے الزام میں ان کے شوہر ملزم عبدالباسط کو اسلحہ سمیت گرفتار کرلیا۔

ملزم نے پولیس کو بتایا کہ انہوں نے گھریلو جھگڑوں اور اختلافات کے باعث اپنی اہلیہ کو قتل کیا۔۔پولیس کے مطابق نبیلہ کی عبدالباسط سے 5 ماہ قبل ہی دوسری شادی ہوئی تھی، جبکہ پہلے شوہر سے ان کے 3 بچے تھ۔