پاکستان میں مقامی صنعت کی ترقی کے لیے تعمیراتی شعبے کو مراعات دی جائیں،زاہد لطیف خان

نمائشیں کسی بھی ملک کی معاشی ترقی اور تجارتی سرگرمیوں کے فروغ میں اہم کردار ادا کرتی ہیں،بلڈنگ مینجمنٹ میں جدید ٹیکنالوجی کو بروئے کار لانا چایئے،آبادکے زیراہتمام ایکسپو سیمینارسے خطاب

جمعہ مئی 22:45

پاکستان میں مقامی صنعت کی ترقی کے لیے تعمیراتی شعبے کو مراعات دی جائیں،زاہد ..
راولپنڈی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 04 مئی2018ء) راولپنڈی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدرزاہد لطیف خان نے کہا ہے کہ پاکستان میں مقامی صنعت کی ترقی کے لیے تعمیراتی شعبے کو مراعات دی جائیں، کنسٹرکشن کا شعبہ تیزی کے ساتھ ترقی کر رہا ہے اور کاروباری سرگرمیوں میں اضافے کا باعث ہے بلڈنگ مینجمنٹ میں جدید ٹیکنالوجی کو بروئے کار لانا چایئے نمائشیں کسی بھی ملک کی معاشی ترقی اور تجارتی سرگرمیوں کے فروغ میں اہم کردار ادا کرتی ہیں کنسٹرکشن، آٹو موبل اور تعمیرات سے جڑے دوسرے شعبوں کے لیے سی پیک میں نادر مواقع موجود ہیں حکومت سیرامکس، اسٹیل ، ٹائر، وائرز، الیکٹرنکس و دیگر شعبوں کے لیے مراعات کا اعلان کرے ان خیالات کا اظہار راولپنڈی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدرزاہد لطیف خان نے گزشتہ روز اسلام آباد میں ایسوسی ایشن آف بلڈرز اینڈ ڈیویلپرز (آباد)کے زیراہتمام ایکسپو سمینارسے خطاب کرتے ہوئے کیا انہون نے کہا کہ چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبہ (سی پیک)پاکستان کی معاشی خوشحالی کا ضامن بنے گا پاکستان میں صنعتی احیاء کا دارمدار سی پیک کی کامیابی پر ہے تاجر برادری اس عظیم منصوبے کو کامیاب بنانے کے لیے ہر ممکن تعاون اور قربانی کے لیے تیار ہے سی پیک بلا شبہ ایک بڑا منصوبہ ہے جو پورے ایشیا کے خطے کی ترقی و خوشحالی میں اہم کردار ادا کرے گا صدرر راولپنڈی چیمبرزاہد لطیف خان نے کہا کہ تاجربرادری سی پیک کو ایک گیم چینجر مانتی ہے اور اس کو کامیاب بنانا ہم سب کی ذمہ داری ہے حکومت ایک ایسی پالیسی اختیار کرے جس کے تحت چین سے وہ صنعت یہاں منتقل ہو جس میں زیادہ سے زیادہ مقامی ہنرمند افراد کو کھپایا جاسکے دوسرا خصوصی اقتصادی صنعتی زونز میں چینی کمپنیوں کے ساتھ مشترکہ منصوبے لگائے جائیں۔