فلسطین میں اسرائیلی مظالم، عالمی برادری کی مجرمانہ خاموشی قابل مذمت ہے، شیعہ علما کونسل

فلسطین پر او آئی سی کی غیرت ایمانی کہیں نظر نہیں آ رہی، فلسطینی مسلمانوں کے قتل کا ذمہ دار امریکہ ہے ، علامہ سبطین سبزواری

بدھ مئی 22:27

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 مئی2018ء) شیعہ علماکونسل پنجاب کے صدر علامہ سید سبطین حیدر سبزواری نے فلسطین میں اسرائیل کے ریاستی مظالم اور نہتے فلسطینی مسلمانوں کی شہادت پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ عالمی برادری کی مجرمانہ خاموشی قابل مذمت ہے۔ اقوام متحدہ خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے جبکہ او آئی سی میں بھی غیرت ایمانی کہیں نظر نہیں آرہی۔

اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ فلسطینی مسلمانوں کے قتل کا ذمہ دار امریکہ ہے، جس نے ناجائز اسرائیلی ریاست کو تحفظ فراہم کررکھا ہے اور اسے تسلیم کرتے ہوئے اپنا سفارتخانہ بھی بیت المقدس منتقل کرلیا ہے۔ کاش مسلمان متحدہوتے تو یہ صورت حال پیدا ہی نہ ہوتی مگرشام، یمن اور بحرین میں بیرونی مداخلت کے باعث ہم اپنی حیثیت کھورہے ہیں۔

(جاری ہے)

انتشار نے امت کا شیرازہ بکھیر دیا ہے۔ جس کی وجہ سے فلسطین اور کشمیر پر کوئی بات کرنے کو تیار نظر نہیں آرہا۔ محض بیان بازی سے مسلمانوں کا تحفظ نہیں ہوگا۔ فلسطین کی آزادی کے لئے عملی جدوجہد کی ضرورت ہے۔ جس طرف 57۔مسلم ممالک کی ابھی توجہ نہیں گئی۔ علامہ سبطین سبزواری نے کہا کہ عرب ممالک فلسطین کی مدد کریں اور امریکہ پر دباو بڑھائیں تواسرائیل اپنے غیر آئینی اقدامات سے باز آسکتا ہے۔

مگر چند مسلم ممالک کے اسرائیل اور امریکہ کے ساتھ اچھے تعلقات ہیں، جنہیں وہ خراب نہیں کرنا چاہتے مگر حق تو یہ ہے کہ ہمیں غیرت ایمانی کا مظاہرہ کر نا ہوگا۔ انہوںنے کہا کہ اقوام متحدہ کی مجرمانہ خاموشی اپنی جگہ او آئی سی سے سوال ہے کہ مسلم ممالک کی اس تنظیم نے فلسطین کے ایشو پر کیا بات ہوئی۔ پاکستان کو سفارتی سطح پراپنا کردار ادا کرنا چاہیے۔