ہائیکورٹ آفس کے اعتراض کے بعد نواز شریف ،مریم نواز کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کیلئے دائر درخواست واپس لے لی گئی

جمعہ مئی 21:54

ہائیکورٹ آفس کے اعتراض کے بعد نواز شریف ،مریم نواز کا نام ای سی ایل ..
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 مئی2018ء) لاہور ہائیکورٹ آفس نے سابق وزیر اعظم نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ میں ڈالنے کیلئے دائر درخواست پر اعتراض لگادیاجس پر درخواست گزار نے درخواست واپس لے لی۔ درخواست گزار سید اقتدار نامی شہری نے نواز شریف اور مریم نواز کانام ای سی ایل میں ڈالنے کے لیے لاہور ہائی کورٹ میں درخواست دائر کی تھی جس میں وفاقی حکومت، وزارت داخلہ اور دیگر کو فریق بنایا گیاتھا۔

(جاری ہے)

درخواست گزار کا موقف تھا کہ نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم صفدر نے قوم سے مسلسل جھوٹ بولا، نواز شریف نے کاغذات نامزدگی میں بھی جھوٹ بولا اور اپنا اقامہ چھپایا۔درخواست گزار نے استدعا کرتے ہوئے کہاکہ عدالت سابق وزیراعظم نواز شریف اور مریم صفدر کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کا حکم دے اور نواز شریف اور مریم صفدر کی تقاریر الیکٹرانک و پرنٹ میڈیا پرشائع اور نشر کرنے پر پابندی عائد کرے۔تاہم سابق وزیر اعظم نواز شریف اور مریم نواز کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کے لیے درخواست پر ہائیکورٹ آفس نے اعتراض لگا دیا جس کے بعد درخواست گزار نے درخواست واپس لے لی۔