اسلام آباد پولیس نے جدید تکنیکی بنیادوں پر 32 قتل کے مقدمات کی تفتیش مکمل کی، چا لان مجاز عدالتو ں میںبھجوائے، 73 ملزمان کو گرفتار کیا گیا

منگل مئی 22:43

اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 29 مئی2018ء) اسلام آباد پولیس نے جدید تکنیکی بنیادوں پر تفتیش عمل میں لاتے ہو ئے 32 قتل کے مقدمات کی تفتیش مکمل کرکے چا لان مجاز عدالتو ں میںبھجوائے، ان میں ملوث 73 ملزمان کو گرفتار کیا گیا، جن میں8 اندھے قتل کے مقدمات سال 2018ء کے 6 جبکہ 2 مقدمات 2017ء بھی شامل ہیں۔ ایس ایس پی آپریشنز اسلام آباد نجیب الرحمان بگوی نے کہا کہ اسلام آباد پولیس شہریوں کی جان و مال کے تحفظ کو یقینی بنانے کیلئے تمام تر ضروری اقدامات بروئے کار لاتے ہوئے جرائم پیشہ عناصر کے خلاف کارروائی کو یقینی بنایا گیا ہے۔

وفاقی پولیس کی طرف سے جاری تفصیلات کے مطا بق ایس ایس پیآپریشنز اسلام آباد نجیب الرحمان بگوی نے سنگین مقدمات اور اندھے قتل و قتل کے جرائم میں ملوث ملزمان کی گرفتار ی کیلئے ایس پی زونز، سب ڈویثرنل پولیس افسران اور ایچ اوز کو ہدایات جاری کی تھیں کہ وہ ان مقدمات میں ملوث ملزمان کو گرفتار کر کے ان کو قانون کے کٹہر ے میں لائیں ان ہد ا یا ت کی روشنی میں وفا قی پولیس کے افسران و جو انو ں نے سال 2018قتل کے 43مقدما ت میں سے 32 قتل کی وارداتوں کو ٹریس کر کے ان میں ملوث 73 ملزمان کو گرفتار کر کے ان کے خلاف چالان عدالتوں میں بھجوائے ۔

(جاری ہے)

ان میں 08اند ھے قتل کے مقدما ت بھی شامل ہیں ، پولیس نہ صرف قاتلوں تک پہنچے بلکہ ان کو گرفتار کر کے ان کے خلاف ٹھوس اور نا قابل تردید شہادتیں اکٹھی کر کے چالان عدالت میں بھجوائے۔اسلام آباد پولیس ا سٹیشزکی حدود میں قتل جیسے سنگین جرم مرتکب ہونے کے بعد پولیس کے تفتیشی افسران مجرموں کو پکڑنے کے لیے تمام وسائل بروئے کار لانے اور نامعلوم نعش ہا ئے کی شنا خت اوران کے لواحقین تک پہنچنے کے لیے تفتیشی عمل کو پیشہ وارانہ طریقے سے آگے بڑھاتے ہیں۔

قتل ہو جانے والے لوگوں کے لواحقین کو بھی علم تک نہیں ہوتا کہ ان کے پیارے کہاں اور کس حال میں ہیں۔ایسی نعشوں کی شناخت اورملزموں تک رسائی دونوں ہی انتہائی مشکل امور ہیں لیکن پولیس کی یہ بھرپور کوشش ہوتی ہے کہ سنگین نوعیت کے جرم میں شریک ملزمان کو کیفرکردار تک پہنچایا جائے۔اسلام آباد پولیس کے افسران کی شب و روز محنت اور اپنے کا م کی لگن نے یہ دونوں امور آسان بنا دیئے ۔

پولیس رپو رٹ کے مطا بق صدرزون نے 13مقدما ت میں 33ملزمان کو گرفتار کیا ، سٹی زون پولیس نے پا نچ مقدما ت میں 7ملزمان کو گرفتار ، انڈ سٹر یل ایر یا زون پولیس نے چار مقدما ت میں ملوث چار ملزمان کو گرفتار کیا ، جبکہ رورل زون پولیس نے 10مقدما ت میں 28ملزمان کی گرفتار ی عمل میں لا ئی اور ملزمان کے خلاف مقدما ت کی تفتیش مکمل کرکے ان کے چالا ن مجاز عدالتو ں کو بھجو ائے ، پولیس نے ان میں 8اند ھے قتل کے مقدما ت کو بھی ٹر یس کر کے ان میں ملوث 17ملزمان کو گرفتار کیا ، ان میں 6مقدما ت سال 2018اور دو مقدما ت سال 2017کے ہیں ،ایس ایس پی اسلام آبادنے تمام پولیس افسران کو ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا کہ تمام تر وسائل اور جدیدطریقہ انوسٹی گیشن کو استعمال کر کے ان وارداتوں میں ملوث عدم گرفتار ملزمان کے گر د گھیر ا تنگ کیا جا ئے اور ان کو گرفتار کر کے قانون کے کٹہرے میں لائیں تاکہ مظلوم خاندانوں کو انصاف مل سکے اور ایسے سنگین نوعیت کے جرائم کا قلع قمع کیا جا سکے ۔

انہوں نے کہا کہ اسلام آ باد پولیس شہریوں کی جان و مال کے تحفظ کو یقینی بنانے کے لئے تمام تر ضر وری اقدامات بروئے کار لاتے ہو ئے جر ائم پیشہ عنا صر کے خلا ف کا رروائی کو یقینی بنا یا گیا ہے تاکہ شہریوں کوریلیف میسر ہو سکے۔ انہو ں نے کہا کہ تما م پولیس افسران جر ائم کی بیخ کنی کے لیے تما م تر اقداما ت بر ئو ے کا ر لا تی ہوئے مجرمان کے گرد گھیر ا تنگ کریں۔ انہوں نے کہا کہ جر ائم پیشہ عنا صر کے ساتھ کسی قسم نر می یا رعایت نہ بر تی جائے۔

متعلقہ عنوان :