سپریم کورٹ نے این آئی سی ایل سکینڈل کیس میں ایف آئی اے کو ملزم محسن وڑائچ کو گرفتار کرنے کے لیے ایک ہفتے کی مہلت دے دی

جمعہ جون 20:45

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 01 جون2018ء) سپریم کورٹ نے این آئی سی ایل سکینڈل کیس میں ایف آئی اے کو ملزم محسن وڑائچ کو گرفتار کرنے کے لیے ایک ہفتے کی مہلت دے دی۔ ملزم کی عدم گرفتاری پر چیف جسٹس پاکستان کا نیب پر برہمی کا اظہار۔ فاضل چیف جسٹس نے کہا کہ مجھے آپ سے زیادہ پتا ہے کہ ملزم کو کیوں گرفتار نہیں کیا جا رہا۔

(جاری ہے)

جیسے راؤ انوار کو گرفتار کرایا محسن وڑائچ کے لیے بھی وہی طریقہ اپنانا پڑے گا۔

عدالت نے لاہور اور کراچی میں دائر ریفرنسز کی ہفتہ وار رپورٹ طلب کر لی۔ نیب میں مقدمے کی ایک دن کی بھی تاخیر برداشت نہیں کی جائے گی۔ ایف آئی اے حکام نے بتایا کہ ملزم کو گرفتار کرنے کے لیے تمام تکنیکی ذرائع استعمال کر رہے ہیں۔۔سپریم کورٹ نے سماعت ایک ہفتے کے لیے ملتوی کر دی۔