نوازشریف نےعدالت میں یوٹرن نہیں، جھوٹ بولا،عمران خان

نپولین اور ہٹلر نے یوٹرن نہ لے کرتاریخی شکست کھائی، حالات کے مطابق یوٹرن نہ لینے والا کبھی اچھا لیڈر نہیں بن سکتا، بلکہ اس سے بڑا بے وقوف کوئی نہیں ہوگا۔ وزیراعظم عمران خان کی سینئر صحافیوں سے گفتگو

sanaullah nagra ثنااللہ ناگرہ جمعہ نومبر 14:58

نوازشریف نےعدالت میں یوٹرن نہیں، جھوٹ بولا،عمران خان
اسلام آباد(اُردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین۔16 نومبر 2018ء) وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ نوازشریف نے عدالت میں یوٹرن نہیں لیا بلکہ جھوٹ بولا، نپولین اور ہٹلر نے یوٹرن نہ لے کرتاریخی شکست کھائی،حالات کے مطابق یوٹرن نہ لینے والا کبھی اچھا لیڈر نہیں بن سکتا۔ انہوں نے آج یہاں سینئر صحافیوں کی ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ دورہ چین کے مثبت نتائج سامنے آرہے ہیں۔

چین سے ہر قسم کی امداد مل رہی ہے دورہ چین سے مطمئن ہیں۔ چین سے ملنے والا پیکج لیک ہوگیا تودوسرے ممالک بھی ایسا پیکج مانگیں گے۔ ماضی میں کسی لیڈر کا دورہ چین اتنا کامیاب نہیں رہا۔ اس دورے کے دورس نتائج مرتب ہوں گے۔انہوں نے یوٹرن کے سوال پر کہا کہ نوازشریف نے عدالت میں یوٹرن نہیں لیا بلکہ جھوٹ بولا۔

(جاری ہے)

سپریم کورٹ کے فیصلوں پر عملدرآمد کریں گے۔

نپولین اور ہٹلر نے یوٹرن نہ لے کرتاریخی شکست کھائی۔ حالات کے مطابق یوٹرن نہ لینے والا کبھی اچھا لیڈر نہیں بن سکتا۔جو یوٹرن لینا نہ جانتا ہوں اس سے بڑا بیوقوف کوئی نہیں ہے۔عمران خان نے کہا کہ کرپشن کیسز کا سامنا کرنے والے چیئرمین پی اے سی نہیں بن سکتے۔شہبازشریف کو چیئرمین پی اے سی بنانا ملک سے مذاق ہوگا۔ شہبازشریف کو کسی صورت چیئرمین پی اے سی نہیں بنائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ دبئی میں پاکستانیوں کے 15ارب ڈالر کا سراغ لگا لیا ہے۔ منی لانڈرنگ کے خلاف مہم کامیابی سے جاری ہے۔لوٹی ہوئی دولت کی واپسی کیلئے کام جاری ہے۔لوٹی دولت کی واپسی کیلئے مختلف ممالک سے معاہدے کررہے ہیں۔برطانیہ اور سوئٹزرلینڈ سے معاہدہ ہوچکا ہے۔نیب چھوٹے مقدمات میں الجھ گیا ہے۔ جس سے نیب کی کارکردگی متاثر ہورہی ہے۔احتساب قوانین میں ترمیم کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ نیب قوانین میں ترمیم کریں گے۔