شاہ محمود قریشی اور اٹلی کی سیکرٹری جنرل برائے خارجہ کے درمیان ملاقات ،ْ دوطرفہ تعلقات پر تبادلہ خیال

دونوں ممالک کے مابین تعلیم، تجارت اور عوام کی سطح پر دوطرفہ تعاون کو مزید فروغ دینے کی ضرورت ہے ،ْ مخدوم شاہ محمود قریشی پاکستان اور اٹلی کے مابین سیاسی، اقتصادی، تجارتی ،تہذیبی اور دفاعی شعبوں میں دیرینہ دوطرفہ تعاون قابل تحسین ہے ،ْ ملاقات میں بات چیت

جمعرات دسمبر 17:01

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 13 دسمبر2018ء) وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے اٹلی اور پاکستان کے مابین تعلیم، تجارت اور عوام کی سطح پر دوطرفہ تعاون کو مزید فروغ دینے کی ضرورت پر دیتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان اور اٹلی کے مابین سیاسی، اقتصادی، تجارتی ،تہذیبی اور دفاعی شعبوں میں دیرینہ دوطرفہ تعاون قابل تحسین ہے۔جمعرات کو وزارتِ خارجہ میں وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے مس ایلیزابیٹا بالونی اطالوی سیکرٹری جنرل برائے خارجہ سے ملاقات کی جس میں دو طرفہ تعلقات سمیت اہم علاقائی اور عالمی امور پر تبادلہ خیال ہوا ۔

ملاقات کے دور ان فریقین نے دوطرفہ باہمی تعلقات کی موجودہ نوعیت پر اطمینان کا اظہار کیا۔ اس موقع پر شاہ محمود قریشی نے کہاکہ پاکستان اور اٹلی کے مابین سیاسی، اقتصادی، تجارتی ،تہذیبی اور دفاعی شعبوں میں دیرینہ دوطرفہ تعاون قابل تحسین ہے ۔

(جاری ہے)

مخدوم شاہ محمود قریشی نے اطالوی سیکرٹری جنرل برائے خارجہ کو موجودہ حکومت کی ترجیحات اور عوامی اصلاحاتی ایجنڈے سے آگاہ کیا۔وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے دونوں ممالک کے مابین تعلیم، تجارت اور عوام کی سطح پر دوطرفہ تعاون کو مزید فروغ دینے کی ضرورت پر زور دیا۔اطالوی سیکرٹری جنرل برائے خارجہ امور نے باہمی دلچسپی کے شعبوں میں دوطرفہ تعاون کے فروغ کے حوالے سے، اپنی حکومت کی جانب سے، بھرپور تعاون کا یقین دلایا۔