عسکری قیادت کا ہر طرح کے بیرونی خطرات سے تحفظ ،امن استحکام اور ملکی ترقی کیلئے پاکستانی عوام کے بہترین مفاد میں تمام ریاستی اداروں کی حمایت جاری رکھنے کے عزم کا اظہار

امید ہے افغان مفاہمتی عمل کامیابی سے ہمکنار ہو گا، کور کمانڈرز کانفرنس آرمی چیف قمر جاوید باجوہ کی زیرصدارت منعقدہ کانفرنس میں خطے کی سیکیورٹی صورتحال کا جائزہ لیا گیا

جمعرات دسمبر 18:00

راولپنڈی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 13 دسمبر2018ء) عسکری قیادت نے ہر طرح کے بیرونی خطرات سے تحفظ ،امن استحکام اور ملکی ترقی کیلئے پاکستانی عوام کے بہترین مفاد میں تمام ریاستی اداروں کی حمایت جاری رکھنے کے عزم کا اظہار کرتے ہوئے امید ظاہر کی ہے کہ افغان مفاہمتی عمل کامیابی سے ہمکنار ہو گا۔جمعرات کو آئی ایس پی آر کے مطابق 216 ویں کور کمانڈرز کانفرنس چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ کی زیر صدارت جی ایچ کیو میں منعقد ہوئی۔

اجلاس کے دوران خطے کی سیکیورٹی اور لائن آف کنٹرول سمیت مشرقی و مغربی سرحدوں کی صورتحال پر خصوصی توجہ مرکوز رکھتے ہوئے جیو سٹریٹجک صورتحال کا جائزہ لیا گیا۔ ملک کی اندر ونی سیکیورٹی کی غرض سے جاری سٹیبلیٹی آپریشنز پر پیشرفت کا بھی جائزہ لیا گیا۔

(جاری ہے)

کور کمانڈرز کانفرنس کے دوران دہشتگردی کو جڑ سے اکھاڑ پھینکنے کیلئے علاقائی طرز فکر کی اہمیت اجاگر کی گئی اور امید ظاہر کی گئی کہ افغان مفاہمتی عمل کامیابی سے ہمکنار ہو گا اور تمام فریقین کی حمایت سے افغان جنگ ایک پر امن منطقی انجام تک پہنچے گی۔

اجلاس کے دوران ہر طرح کے بیرونی خطرات سے تحفظ کے بھر پور عزم کا اظہار کیا گیا ۔ اجلاس کے شرکاء نے اس عزم کا اظہار کیا کہ انسداد دہشتگردی کے عسکری آپریشنز سے حاصل شدہ کامیابیوں کو مستحکم کیا جائیگا جن کی وجہ سے ملکی سیکیورٹی صورتحال بہتری کی طرف گامزن ہوئی ہے اور ملک سماجی اقتصادی ترقی کی راہ پر چل پڑا ہے ۔ عسکری قیادت نے اس عزم کا اظہار کیا کہ امن استحکام اور ملکی ترقی کیلئے پاکستانی عوام کے بہترین مفاد میں تمام ریاستی اداروں کی حمایت جاری رکھی جائیگی۔