گوجرانوالہ میں گرجہ گھر کی تعمیر کے لیے مسلماںوں کی مدد

ہمیں خوشی ہے کہ نہ صرف مقامی مسیحی برادری بلکہ ہمارے مسلمان بھائی بھی اس تعمیراتی کام کی حمایت کر رہے ہیں ، جو اخوت اور امن کی ایک حقیقی علامت ہے: چرچ کے پادری جوزف پارش

Usama Ch اسامہ چوہدری منگل فروری 00:34

گوجرانوالہ میں گرجہ گھر کی تعمیر کے لیے مسلماںوں کی مدد
گوجرانوالہ (اردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین 17 فروری 2020ّ) : گوجرانوالہ میں گرجہ گھر کی تعمیر کے لیے مسلماںوں کی مدد، تفصیلات کے مطابق گوجرانوالہ میں چرچ میں مزید عبادت گزاروں کی رہائش کے لئے وسعت دی جارہی ہے۔ پچھلے نومبر میں توسیع کا کام اس وقت شروع ہوا ، جب سینٹ جوزف کے پیرش کے پادری باپ سمران انور نے سنگ بنیاد رکھا تھا۔ اس علاقے میں جہاں چرچ کی تعمیر ہو رہی ہے اس میں پچاس سے زیادہ عیسائی خاندان رہ رہے ہیں۔

غیر ملکی میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے فادر ثمرین انور نے چرچ کی تعمیر کے لئے مسلمان شہریوں کا شکریہ ادا کیا۔ فادر سامران نے مزید کہا کہ ہمیں خوشی ہے کہ نہ صرف مقامی مسیحی برادری بلکہ ہمارے مسلمان بھائی بھی اس تعمیراتی کام کی حمایت کر رہے ہیں جو کہ اخوت اور امن کی ایک حقیقی علامت ہے۔

(جاری ہے)

انہوں نے مزید کہا کہ مسلم برادری کی مالی مدد کو کبھی فراموش نہیں کیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ یہ آرکیڈیوس کے قدیم ترین مشن اسٹیشنوں میں سے ایک ہے، جو بیلجیم سے تعلق رکھنے والے کپچن مشنریوں نے 1953 میں قائم کیا تھا۔ یہ دوبارہ تعمیر شدہ گرجا گھر ہماری شناخت کی ایک نمایاں علامت اور وفاداروں کے لئے ایک پناہ گاہ ہوگی۔ ایک مقامی استاد نذیر مسیح نے بتایا کہ مسلم کمیونٹی کے ایک رکن جنہوں نے تعمیراتی کام کے لئے ساٹھ ہزار روپے عطیہ کیے اور اس مقدس مقصد میں حصہ ڈالنے کے قابل ہونے پر خوشی کا اظہار کیا۔

انکا کہنا تھا کہ خدا کے گھر کے لئے میری چھوٹی چھوٹی شراکت نے میرے دل کو خوشی سے بھر دیا ہے جس کا اظہار الفاظ میں نہیں کیا جاسکتا ہے۔ ہم امن اور ہم آہنگی کے ساتھ ساتھ رہتے ہیں۔ ہماری برادری دوسروں کے لئے ایک روشن مثال ہے۔ مسلمانوں کی جانب سے یہ ایک علیٰ کردار اور اخلاق کا ثبوت دیا گیا۔

متعلقہ عنوان :