Live Updates

ڈیٹول پاکستان نے نرسز اور دیگر طبی عملے کو کورونا سے بچانے کے لیے شاندار قدم اُٹھا لیا

ڈیٹول کی جانب سے پاکستان کے متعدد ہسپتالوں کے عملے میں کورونا سے بچاؤ کا حفاظتی لباس اور دیگر سامان تقسیم کیا جا رہا ہے

ہفتہ مئی 22:27

ڈیٹول پاکستان نے نرسز اور دیگر طبی عملے کو کورونا سے بچانے کے لیے شاندار ..
کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 23 مئی2020ء) اس وقت جبکہ پوری دُنیا کورونا کی وبا سے نمٹنے میں مصروف ہے، ایسے بحرانی دور میں کورونا مریضوں کی زندگیاں بچانے والے طبی ورکرحقیقی ہیرو بن کر سامنے آئے ہیں۔ پاکستان میں ہیلتھ کیئر کا شعبہ کورونا سے محفوظ رکھنے والے ساز و سامان کی کمی کے باعث شدید خطرات اور مسائل سے دوچار ہے۔اس مشکل گھڑی میں، ڈیٹول پاکستان نے مملکت کی کوویڈ19- کے خلاف لڑائی کے دوران امدادی سرگرمیاں شروع کر دی ہیں۔

ڈیٹول کی جانب سے نرسوں کے عالمی دن کے موقع پر ہیلتھ کیئرکے فرنٹ لائن ہیروز کوپارٹنر طبی اداروں کے ذریعے حفاظتی لباس (PPE kits) فراہم کیے گئے، جن میں کراچی کے چاراہم ہسپتال جناح پوسٹ گریجویٹ میڈیکل کالج، سول ہسپتال، انڈس ہسپتال اور ڈاؤ میڈیکل کالج اوجھا کیمپس شامل ہیں۔

(جاری ہے)

کورونا کے زیادہ تر متاثرین انہی ہسپتالوں میں زیر علاج ہیں،تاہم ان طبی مراکز کے عملے کے پاس کورونا سے محفوظ رہنے کے لیے مطلوبہ ساز و سامان کی شدید کمی ہے، جس کی وجہ سے درجنوں ہیلتھ ورکرز خود بھی کورونا کا شکار ہو چکے ہیں۔

ڈیٹول کمپنی کی جانب سے پاکستان کے دیگر صوبوں میں بھی متعلقہ سرکاری اداروں اور نجی رفاہی اداروں کے ذریعے بھی حفاظتی کٹس تقسیم کی جا رہی ہیں۔ رواں سال کے آغاز پر ڈیٹول ساز ادارے ریکٹ بینکسر نے وزارت برائے نیشنل ہیلتھ سائنسز کے ساتھ اشتراکِ عمل کا اعلان کیا تھا۔ اس اشتراک کے تحت مفادِ عامہ کی ایک مہم چلائی گئی، جس میں عوام کو جراثیم اور متعدی بیماریوں سے متعلق خطرات اور بچاؤ کے طریقوں سے آگاہ کیا گیا۔

کورونا کی وبا پُھوٹنے کے بعد بھی ڈیٹول کی جانب سے اپنے صارفین کو حفظان صحت اور بیماریوں سے بچاؤ کی خاطر مختلف ذرائع ابلاغ اور تعلیمی پلیٹ فارمز کے ذریعے مسلسل آگاہی دلائی جا رہی ہے۔ کمپنی کی جانب سے حالیہ دنوں کوویڈ19- کا مقابلہ کرنے کے لیے 50 کروڑ روپے کے پیکیج کا اعلان کیا گیا ہے۔ اس پیکیج میں مختص کی گئی رقم کی مدد سے طبی عملے کو حفاظتی ساز و سامان مہیا کیا جائے گا، ہسپتالوں میں صفائی ستھرائی کے لیے جراثیم کُش سامان مہیا کیا جائے گااور بڑے پیمانے پر ڈس انفیکشن مہم شروع کی جائے گی۔

70 سال کی طبی روایت کے ساتھ، ڈیٹول پاکستان کا نمبر ون اینٹی بیکٹریل برانڈ بن چکا ہے۔ اپنے صارفین کی صحت کے تحفظ میں پیش پیش رہنے والے ڈیٹول کی جانب سے لوگوں کو جراثیم سے بچانے کے لیے ہر دور میں اچھوتے آئیڈیاز متعارف کرائے گئے۔ ’ہوگا صاف اور سیف پاکستان‘ مہم کے تحت ڈیٹول تمام پاکستانیوں کو صحت مند اور محفوظ بنانے کے مشن پر گامزن ہے۔
کرونا وائرس کی تباہ کاریاں سے متعلق تازہ ترین معلومات