Live Updates

پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ مسترد، ن لیگ نے قرارداد پنجاب اسمبلی میں جمع کروا دی

حکومت نے ہر پندرہ دن بعد عوام پر پٹرول پمپ گرانے کا وطیرہ بنا لیا،پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ فی الفور واپس لیا جائے۔قرارداد کا متن

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان ہفتہ 16 اکتوبر 2021 12:16

پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ مسترد، ن لیگ نے قرارداد پنجاب اسمبلی ..
لاہور(اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 16 اکتوبر 2021ء) : پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ مسترد کرنے کی قرارداد پنجاب اسمبلی میں جمع کرادی گئی ہے۔قرارداد مسلم لیگ ن کے رہنما حنا پرویز بٹ کی جانب سے جمع کرائی گئی۔قرارداد کے متن میں کہا ہے کہ یہ ایوان پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ مسترد کرتا ہے۔پٹرول کی قیمت میں10روپے اضافہ غریب عوام کے ساتھ ظلم ہے۔

پٹرول مہنگا ہونے کا اثر ہر ضروریات زندگی کی اشیاء پر پڑتا ہے۔لیگی رہنما کی جانب سے جمع کرائی گئی قرار داد میں مزید کہا گیا کہ حکومت نے ہر پندرہ دن بعد عوام پر پٹرول پمپ گرانے کا وطیرہ بنا لیا ،غریب عوام مہنگائی میں اضافہ کی وجہ سے فاقوں پر مجبور ہیں۔قرارداد میں مطالبہ کیا گیا کہ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ فی الفور واپس لیا جائے۔

(جاری ہے)

واضح رہے کہ مہنگائی کی ستائی ہوئی عوام پر حکومت نے پیٹرول بم گرا دیا۔ وفاقی وزارت خزانہ نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کا نوٹیفکیشن جاری کردیا۔ وزارت خزانہ سے جاری نوٹیفکیشن کے مطابق قیمتوں میں 9 روپے سے 12روپے تک اضافہ کیا گیا ہے، حکم نامہ کے مطابق پیٹرول کی قیمت میں 10 روپے 49 پیسے فی لیٹر کا اضافہ کیا گیا۔ وزارت خزانہ کے نوٹیفکیشن کے بعد پیٹرول کی نئی قیمت 137 روپے 79 پیسے ہوگئی جبکہ ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت میں 12روپے 44پیسے کا اضافہ کیا گیا ہے۔

ہائی اسپیڈ ڈیزل کی نئی قیمت134روپے48پیسےمقرر کی گئی ہے جبکہ مٹی کے تیل کی قیمت میں10روپے95پیسے کا اضافہ کے بعد نئی قیمت 110روپے 26پیسے ہوگئی۔ وزارت خزانہ کی جانب سے لائٹ ڈیزل کی قیمت میں8روپے84پیسے کا اضافہ کیا گیا ہے جس سے لائٹ ڈیزل کی نئی قیمت108روپے35 پیسے ہوگئی۔ پیٹرولیم مصنوعات کی نئی قیمتوں کا اطلاق 16 اکتوبر یعنی آج سے ہو گیا ہے۔ ذرائع کے مطابق عالمی منڈی میں اس وقت تیل کی قیمت تین سال کی بلند ترین سطح پر پہنچ چکی ہے۔عالمی مارکیٹ میں 85ڈالرفی بیرل تک قیمتیں بڑھ جانے پر اضافہ کیا گیا، عالمی مارکیٹ میں اکتوبر 2018ء کے بعد تیل کی یہ زیادہ سے زیادہ قیمت ہے۔
Live مہنگائی کا طوفان سے متعلق تازہ ترین معلومات