مسلم لیگ ن کی پانچ بڑی وکٹیں گرنے کو تیار

ارکین اسمبلی افضل ڈھانڈلہ، میاں رشید،غضنفر چھینہ،عامر اور امیر محمد نے پاکستان تحریک انصاف میں شمولیت کا فیصلہ کر لیا

منگل مئی 22:28

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبار آن لائن۔ منگل مئی ء):مسلم لیگ ن کی پانچ بڑی وکٹیں گرنے کو تیار ہیں۔مسلم لیگ ن کے پانچ ارکین اسمبلی افضل ڈھانڈلہ، میاں رشید،غضنفر چھینہ،عامر اور امیر محمد نے پاکستان تحریک انصاف میں شمولیت کا فیصلہ کر لیا۔پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان سے ملاقات کے بعد شمولیت کا اعلان کریں گے۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ ایک سال کے اندر اندر تحریک انصاف نے جس طرح سے پاکستانی سیاست میں قدم جمائے ہیں اور اپنی سیاسی ساکھ کو مضبوط کیا ہے اس کی پاکستان کی سیاسی تاریخ میں کم ہی مثال ملتی ہے۔پانامہ لیکس کیس سے شروع ہونے والی پاکستان تحریک انصاف کی سیاسی فتوحات کا شروع ہونے والا سفر کہیں بھی تھمتا ہوا دکھائی نہیں دیتا۔

(جاری ہے)

اس دوران جس طرح عمران خان کے سیاسی لہجے اور طرز عمل میں پختگی آئی ہے وہ بھی قابل ذکر ہے۔

ایک جانب تحریک انصاف کی مضبوط ہوتی ہوئی سیاسی پوزیشن تو دوسری جانب اسکی حریف جماعتوں کی گرتی ہوئی ساکھ نے تحریک انصاف کو پاکستانی سیاست کی چوٹی کی جماعت بنا دیا ہے۔گزشتہ ایک سال میں پاکستان تحریک انصاف میں دیگر جماعتوں بالخصوص مسلم لیگ ن اور پاکستان پیپلز پارٹی کے بڑے بڑے ناموں نے شمولیت اختیار کی ہے جن میں رضا حیات، ندیم افضل چن،فردوس عاشق اعوان اور بڑے بڑے انتخابات جیتنے والے نام شامل ہیں۔

جنوبی پنجاب کے نام پر مسلم لیگ ن نے سے بغاوت کرکے جنوبی پنجاب صوبہ محاذ بنانے والوں نے بھی بعد ازاں عمران خان کے ساتھ مل جانے کا اعلان کر دیا۔اس حوالے سے تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق 100سے زائد الیکٹیبلز اس وقت دیگر پارٹیوں کو خیر باد کہہ کر پاکستان تحریک انصاف میں شامل ہو چکے ہیں جن میں سے زیادہ تر کی سیاسی وفاداریاں مسلم لیگ کے ساتھ ہیں ۔

تازہ ترین اطلاعات کے مطابق مسلم لیگ ن کی مزید پانچ بڑی وکٹیں گرنے کو تیار ہیں۔مسلم لیگ ن کے 5 اہم ترین اراکین اسمبلی نے تحریک انصاف میں شمولیت کا فیصلہ کر لیا ہے۔نجی ٹی وی کی خبر کے مطابق مسلم لیگ ن کو خیر باد کہہ کر پاکستان تحریک انصاف میں شمولیت کا اعلان کرنے والوں میں افضل ڈھانڈلہ، میاں رشید،غضنفر چھینہ،عامر اور امیر محمد شامل ہیں۔مسلم لیگ ن کے یہ باغی اراکین کل عمران خان سے ملاقات کے بعد تحریک انصاف میں شمولیت کا اعلان کریں گے۔

Your Thoughts and Comments