اُردو پوائنٹ پاکستان اسلام آباداسلام آباد کی خبریںوفاقی حکومت کا نواز شریف اور مریم نواز کا ٹرائل جیل میں نہ کرنے کا فیصلہ نگران ..

وفاقی حکومت کا نواز شریف اور مریم نواز کا ٹرائل جیل میں نہ کرنے کا فیصلہ

نگران وفاقی کابینہ فیصلے کی منظوری کل دے گی، اس سے قبل سابق وزیراعظم اور ان کی صاحبزادی کا ٹرائل جیل میں کرنے کا اعلان کیا گیا تھا

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 17 جولائی2018ء) وفاقی حکومت کا نواز شریف اور مریم نواز کا ٹرائل جیل میں نہ کرنے کا فیصلہ، نگران وفاقی کابینہ فیصلے کی منظوری کل دے گی، اس سے قبل سابق وزیراعظم اور ان کی صاحبزادی کا ٹرائل جیل میں کرنے کا اعلان کیا گیا تھا۔ تفصیلات کے مطابق نگران وفاقی حکومت نے سابق وزیراعظم نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز کیخلاف العزیزیہ اور فلیگ شپ ریفرنسز کا ٹرائل جیل میں نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

نگران وفاقی حکومت نے دونوں کیسز کا اوپن ٹرائل کرنے کا فیصلہ کیا، اس سلسلے میں منظوری کل بروز بدھ کو دی جائے گی۔ دوسری جانب اس حوالے سے نگران وزیر
اطلاعات بیر سٹر علی ظفر نے کہا ہے کہ العزیزیہ اور فلیگ شپ ریفرنس کی ایک
پیشی سیکیورٹی کے باعث جیل میں ہو گی مقدمہ کھلی عدالت میں ہی چلے گا۔

(خبر جاری ہے)

پیمرا
فیصلے کرنے میں آزاد ہے،ح کومت کا کوئی عمل دخل نہی۔

ں اڈیالہ جیل پنجاب کی
حدود میں ہے سہولیات کی فراہمی پنجاب حکومت کی زمہ داری ہے۔ نجی ٹی وی سے
گفتگو کرتے ہوئے علی ظفر نے کہا کہ آئین کے مطابق صاف ٹرائل ہر شخص کا حق
ہے نواز شریف کے خلاف ٹرائل اوپن اور صاف ہو گا نیب ایکٹ کے مطابق عدالت کو
جیل میں منتقل کیا جا سکتا ہے نیب نے سیکیورتی کا لکھا تو کا بینہ نے نیب
کی درخواست اور سیکیورٹی کو دیکھتے ہوئے مقدمہ کو جیل میں منتقل کیا
انہوںنے کہا کہ فیصلہ ایک پیشی کے لئے اور عارضی تھا نواز شریف کا مقدمہ
کھلی عدالت میں اور شفاف طریقے سے چلے گا انہوں نے کہا کہ جس دن نیب
میںنواز شریف کی پیشی تھی اس سے ایک دن قبل وہ آئے تھے پہے تو یہ بھی پتہ
تھا کہ وہ آئین گے یا نہیں آئیں گے اور ایک دم سے سیکیورٹی کے انتظامات
ہونا مشکل تھا انہوں نے کہا کہ اڈیالہ جیل وفاق میں نہیں بلکہ پنجاب کی
حدود میں ہے قانون سب کے لئے برابر ہے جیل کے انتظامات سے متعلق پنجاب
حکومت بتا سکتی ہے اگرنواز شریف کو سہولیات نہیں دی گئیں تو اس کی تحقیقات
ہونی چاہئیں انہوں نے کہا کہ نگران حکومت آنے پر پیمرا کی آزادی کا
ارڈینس جاری گیا گیا پیمر فیصلے کرنے میں آزاد ہے پیمرا پانے قانون کے
مطابق فیصلے کر سکتی ہے میڈیا کو کنٹرول کرنے پر حکومت پر تنقید نہیں کی جا
سکتی ۔



اپنی رائے کا اظہار کریں -

اسلام آباد شہر کی مزید خبریں