حکومت نے وفاقی بجٹ پیش ہونے کے بعد اب تک 11 بار پیٹرولیم مصنوعات میں اضافہ کیا

بجٹ کے بعد پیٹرول کی فی لیٹر قیمت سب سے زیادہ 39 روپی27 پیسے بڑھائی گئی، رپورٹ

پیر 17 جنوری 2022 14:18

حکومت نے وفاقی بجٹ پیش ہونے کے بعد اب تک 11 بار پیٹرولیم مصنوعات میں اضافہ کیا
کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 17 جنوری2022ء) حکومت نے وفاقی بجٹ کے بعد سے اب تک 11 بار پیٹرولیم مصنوعات میں اضافہ کیا اور اس دوران پیٹرول کی قیمت ملکی تاریخ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گئی۔

(جاری ہے)

وفاقی حکومت نے عوام پر پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں کا بوجھ مزید بڑھا دیا ہے، وفاقی بجٹ پیش ہونے کے بعد سے اب تک 11ویں بار پیٹرولیم مصنوعات مہنگی ہوئی ہیں، اور 15 جون 2021 کے بعد سے اب تک پیٹرولیم مصنوعات 39 روپے 27 پیسے تک مہنگی ہوچکی ہیں۔

رپورٹ کے مطابق پیٹرول کی فی لیٹر قیمت سب سے زیادہ 39 روپے 27 پیسے بڑھائی گئی اور پیٹرول کی قیمت ملکی تاریخ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گئی۔ اسی عرصے میں ہائی اسپیڈ ڈیزل فی لیٹر 33روپے 86پیسے مہنگا کیا گیا، لائٹ ڈیزل کی قیمت میں فی لٹر 36 روپی89 پیسے اضافہ کیا گیا، جب کہ مٹی کے تیل کی قیمت فی لیٹر 36 روپے 48 پیسے بڑھائی گئی۔

کراچی شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments