ْاگر بھارت میں پاکستانی مواد نشر نہیں کیا جاتا تو ہمیں بھی نہیں کرنا چاہیے ،مریم اورنگزیب

جمعرات اپریل 22:04

ْاگر بھارت میں پاکستانی مواد نشر نہیں کیا جاتا تو ہمیں بھی نہیں کرنا ..
اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 اپریل2018ء) وزیر مملکت برائے اطلاعات مریم اورنگزیب نے کہا ہے کہ بھارت میں اگر پاکستانی مواد نشر نہیں کیاجاتا تو یہاں بھی بھارتی مواد نشر نہیں کیاجانا چاہیے پاکستان 60کی دہائی میں فلم انڈسٹری میں تیسرا ملک تھا تاہم دہشتگردی نے فلم انڈسٹری کو متاثر کیا تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز قائمہ کمیٹی برائے اطلاعات ونشریات کا اجلاس ہوا جس میں وزیر مملکت مریم اورنگزیب نے کہا کہ پاکستان 60 کی دہائی میں فلم انڈسٹری میں تیسرا ملک تھا اس کے بعد 80اور 90کی دہائی میں بھی فلم انڈسٹری کے حالات بہتر تھے تاہم 90 دہائی کے بعد دہشتگردی نے پاکستان فلم انڈرسٹری کو بہت متاثر کیا انہوں نے مزید کہا کہ 10فیصد غیر ملکی مواد نشر کرنے کے کوٹے کی اجازت ہے لیکن اگر بھارت میں پاکستانی مواد نشر نہیں کیاجاتا تو یہاں بھی بھارتی مواد نشر نہیں ہونا چاہیے مریم اورنگزیب نے کہا کہ ہمارا مواد بہت اچھا ہے اس کے ڈیمانڈ میں بھی اضافہ ہورہا ہے آج کل براڈکاسٹنگ سے زیادہ انٹرنیٹ پر مواد دیکھا جارہا ہے