قائد اعظم ؒ کے افکار ، تحریریں ، پیغامات اور خطبات فلاحی معاشرہ کی تشکیل میں اہم ہیں ،گورنرسندھ محمد زبیر

قائد کے پاکستان کی ترقی وخوشحالی کے لئے تمام پاکستانیوں نے مل کر کام کرنا ہے اس ضمن میں اقلیتی برادری اہم خدمات انجام دے رہی ہیں ،ن لیگ سندھ اقلیتی ونگ کے وفد سے ملاقات

جمعہ اپریل 20:26

قائد اعظم ؒ کے افکار ، تحریریں ، پیغامات اور خطبات فلاحی معاشرہ کی تشکیل ..
کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 20 اپریل2018ء) گورنرسندھ محمد زبیر نے کہا ہے کہ بابائے قوم نے پاکستان کے قیام کا مقصد بلا تفریق رنگ و نسل و مذہب عوام کی فلاح وبہبود ، یکساں ترقی کے مواقع ، مذہبی ہم آہنگی کافروغ اور فلاحی ریاست کی تشکیل قرار دیا تھا اس ضمن میں قائد اعظم ؒ کے افکار ، تحریریں ، پیغامات اور خطبات فلاحی معاشرہ کی تشکیل میں اہم ہیں ، قائد کے پاکستان کی ترقی وخوشحالی کے لئے تمام پاکستانیوں نے مل کر کام کرنا ہے اس ضمن میں اقلیتی برادری اہم خدمات انجام دے رہی ہیں ۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے گورنرہائوس میں مسلم لیگ (ن) سندھ کے اقلیتی ونگ کے صدر ڈاکٹر شام سندر ایڈوانی کی قیادت میں مختلف مذاہب سے تعلق رکھنے والے افراد کے وفد سے ملاقات میں کیا ۔

(جاری ہے)

ملاقات میں مذہبی ہم آہنگی کے فروغ ، صوبہ کی ترقی و خوشحالی میں اقلیتی برادری کے کردار ، سماجی شعبہ ، قومی ترقی اور دیگر شعبہ ہائے زندگی میں اقلیتی برادری کی خدمات سمیت اہمیت کے حامل دیگر امور پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا ۔

گورنرسندھ نے مزید کہا کہ صوبہ میں اقلیتی برادری کو مکمل مذہبی آزادی ، سماجی اور دیگر شعبہ ہائے زندگی میں ترقی کے یکساں مواقع حاصل ہیں جبکہ ترقیاتی کاموں میں ان کی زیادہ سے زیادہ شمولیت کو یقینی بنایا جا رہا ہے ، صوبہ کی ترقی وخوشحالی میں اقلیتی برادری کے کردار کو فراموش نہیں کیا جا سکتا ،حکومت پاکستان کوعالمی معاشی نقشہ پر نمایاں مقام دلانے کے لئے پر عزم ہے اس ضمن میں اقلیتی برادری کا کردار انتہائی اہمیت کا حامل ہے ۔

انہوں نے کہا کہ تمام مذاہب برداشت کے رویہ کے فروغ کا درس دیتے ہیں ہمیں بھی معاشرہ میںعدم برداشت کے رویہ کے خاتمہ کے لئے کام کرنا ہوگا ، عدم برداشت کے رویہ نے معاشرہ میں بگاڑ پیدا کیا جس سے خرابیوں نے جنم لیا۔ انہوں نے کہا کہ وفاق کے تعاون سے صوبہ کے متعدداضلاع میں ترقیاتی منصوبے شروع کردیئے گئے ہیں ، ان منصوبوں میں اقلیتی برادری کے علاقوں کو بھی بھرپور طریقہ سے شامل کیا گیا ہے ، ٹھٹھہ میں ہیلتھ کارڈ ز کی تقسیم میں تمام اکائیوں کی شمولیت کو یقینی بنایا گیا ہے جو کہ موجودہ حکومت کا وژن بھی ہے۔

انہوں نے کہا کہ صوبہ سمیت پورے پاکستان میں اقلیتی برادری کو پارلیمنٹ ،عدلیہ ، انتظامیہ ، سماجی، معاشی اور اقتصادی شعبوں میں مناسب نمائندگی حاصل ہے ، اقلیتی برادری سے وابستہ افراد پارلیمنٹ میں قانون سازی میں بھی بھرپور حصہ لے رہے ہیں جو اس بات کا واضح ثبوت ہے کہ پاکستان میں بلا تفریق تمام اکائیوں کو یکساں مواقع حاصل ہیں ۔ ملاقات میں شام سندر ایڈوانی نے گورنرسندھ کو بتایا کہ اقلیتی برادری صوبہ کی ترقی و خوشحالی میں بھرپور انداز میں کام کررہی ہے ، قومی جذبہ سے سرشار اقلیتی برادری پاکستان کو عالمی معاشی نقشہ پر نمایاں مقام دلانے کے لئے بھرپور خدمات انجام دے رہی ہے اس ضمن میں مذہبی تہواروں میں پاکستان کی سلامتی ، استحکام اور خوشحالی کے لئے خصوصی دعائیہ تقریبات کا اہتما م بھی کیا جا تا ہے جو ان کی وطن سے محبت کا والہانہ اظہار ہے ۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت کے اقدامات کے باعث اقلیتی برادری کے افراد کو بھی معیار زندگی بلند کرنے اور روزگار کے مواقعوں کی دستیابی سے غربت کے خاتمہ میں مدد مل رہی ہے اس ضمن میں سرکاری ملازمتوں میں اقلیتوں کے لئے مختص 5 فیصد کوٹہ پر عملدرآمد سے مزید بہتری یقینی ہے ۔ گورنرسندھ نے کہا کہ وہ اس ضمن میں وفاقی حکومت سے بات کرینگے۔