فلسطین میں اسرائیلی مظالم پر عالمی طاقتوں سمیت ہمارے حکمرانوں کی مجرمانہ خاموشی قابل مذمت ہے ، مولانا عبدالحق ہاشمی

جمعہ مئی 19:20

کوئٹہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 مئی2018ء) جماعت اسلامی بلوچستان کے امیر مولانا عبدالحق ہاشمی نے کہاکہ فلسطین میں اسرائیلی مظالم پر عالمی طاقتوں سمیت ہمارے حکمرانوں کی مجرمانہ خاموشی قابل مذمت ہے ، موجودہ حالات میں او آئی سی یا اقوام متحدہ کے اجلاسوں سے کچھ نہیں ہو گا بلکہ عملی اقدامات کرتے ہوئے امریکہ اور اسرائیل سے مکمل طور پر سفارتی اور معاشی تعلقات کا بائیکاٹ کرنا ہوگا تاکہ امریکہ کے ساتھ برابری کی بنیاد پر تعلقات استوار کیے جا سکیں ۔

عوا م الناس یہودی مصنوعات کا بائیکاٹ کریں امت کااتحاد اورمسلم حکمرانوں کی امریکی غلامی سے نکلنا وقت کی اہم ضرورت ہے ۔عالم کفر مسلمانوں کی ایٹمی قوت واسلحہ سے نہیں نوجوانوں کے شوق شہادت وجذبہ جہاد سے خائف وپریشان ہیں ۔

(جاری ہے)

کفر ی مظالم کے خلاف جہاد قیادت قیامت تک جاری رہیگا ۔ امت مسلمہ کی سرزمین پر آج ہماری بے اتفاقی اور مسلم حکمرانوں کی بے حسی وامریکی غلامی اقتدار سے محبت کی وجہ سے کفر قابض ہے ۔

انہوں نے مزید کہا کہ استعماری طاقتیں عالم اسلام کے خلاف متحد ہو کر کاروائیوں میں مصروف عمل ہیں۔ پوری دنیا میں صہیونی طاقتیں مسلمانوں کے خلاف طرح طرح کے ہتھکنڈے استعمال کرکے مسلمانوں کو تشدد پسند ، دہشت گرد ثابت کرنے پر تل ہوئی ہیں۔ اسرائیل 70 سال سے انسانی حقوق اور اقوام متحدہ کی خلاف ورزی کرتے ہوئے مظلوم فلسطینیوں کے ساتھ خون کی ہولی کھیل رہا ہے موجود حالات میںمسلم امہ کا اتحاد وقت کی اہم ضرورت بن چکا ہے ۔

مسلم ممالک کے آپس کے اختلافات سے امریکہ اور اسرائیل فائد اٹھا رہے ہیں ، فلسطین افغانستان اور کشمیر سمیت پوری دنیا میں مسلمانوں پر مظالم عالمی کفر طاقتوں کی سازش ہے جن کو سمجھنے کی ضرورت ہے ۔ مسلم حکمران بے حسی اور بے حمیتی کا شکار ہیں۔ بیت المقدس کی حفاظت اور فلسطینیوں کی مدد دنیا کے ہر مسلمان کا فرض ہے ہم ترکی کے صدرطیب اردگان کو سلام پیش کرتے ہیں جنہوں نے امریکہ اور اسرائیل کی بدمعاشی کے خلاف عملی اقدامات اٹھائے ۔50 سے زائد اسلامی ممالک کے ہوتے ہوئے قبلہ اول کی بے حرمتی اور مسلمانوں کے خلاف جارحیت قابل افسوس امرہے جس پر ہمارے حکمرانوں کو ہوش کے ناخن لینے ہوں گے ۔