وفاقی حکومت نے بھارتی فلموں کی نمائش پر پابندی لگا دی

پابندی عید سے 2روز قبل شروع ہو کر 2ہفتے بعد تک جاری رہے گی، نوٹیفیکیشن جاری کر دیا گیا

Syed Fakhir Abbas سید فاخر عباس جمعرات مئی 20:46

وفاقی حکومت نے بھارتی فلموں کی نمائش پر پابندی لگا دی
اسلام آباد(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔24 مئی 2018ء) وفاقی حکومت نے بھارتی فلموں کی پاکستان میں نمائش پر پابندی لگا دی۔ پابندی عید سے 2روز قبل شروع ہو کر 2ہفتے بعد تک جاری رہے گی، نوٹیفیکیشن جاری کر دیا گیا۔تفصیلات کے مطابق وفاقی حکومت نے بھارتی فلموں کی پاکستان میں نمائش پر پابندی لگا دی۔وفاقی حکومت کی جانب سے بھارتی فلموں پر پابندی عارضی طور پر لگائی گئی ہے۔

پابندی کا اطلاق عید الفطر اور عید الاضحیٰ پر ہو گا۔پابندی عید والے روز سے شروع ہو کر عید کے 2 ہفتے بعد تک جاری ہے گی۔اس حوالے سے وفاقی حکومت نے نوٹیفیکیشن جاری کر دیا ہے۔وفاقی حکومت کا موقف ہے کہ ایسا پاکستانی فلمی صنعت کو فروغ دینے کے لیے کیا گیا ہے ۔ یاد رہے کہ پاکستان میں 1965 سے انڈین فلموں کی درآمد پر پابندی عائد ہے اور انڈین فلمیں پاکستان میں ممنوعہ درآمدی اشیا کی فہرست میں شمار ہوتی ہیں۔

(جاری ہے)

2007 میں حکومت نے ایک پالیسی بنائی تھی جس کے تحت انڈین فلموں کی محدود تعداد کو پاکستان میں نمائش کے لیے خصوصی استثنٰی یا این او سی جاری کیا جاتا تھا جس کے بعد وہ فلم پاکستان میں درآمد کی جاتی تھی اور پھر اسے سینسر بورڈ منظور کرتا تھا۔تا ہم پاکستان میں بھارتی فلموں پر پابندی لگتی بھی رہی ہے اور ہٹتی بھی رہی ہے۔تا ہم بھارتی فلموں کی پاکستان میں نمائش ایک بڑا موضوع رہا ہے۔

ایک جانب سینما مالکان اس کے حق میں نظر آتے ہیں تو فنکار برادری اسے پاکستانی فلمی صعت کے لیے زہر قاتل سمجھتی ہے۔۔پاکستان میں بھارتی فلموں کی نمائش کی ایک وجہ پاکستان فلموں کا غیر معیاری ہونا بھی رہا ہے تا ہم کچھ عرصہ سے پاکستانی فلموں کے معیار میں آنے والی بہتری نے اس نقطے کی کمی بھی پوری کر دی ہے۔تا ہم ابھی بھی پاکستان کا ایک بڑا طبقہ پاکستانی فلموں کی بجائے بھارتی فلموں کو ترجیح دیتا ہے۔