القدس کی آزادی کی جدوجہد ہمارے ایمان کا حصہ ہے : لیاقت بلوچ

ملی یکجہتی کونسل کی تمام جماعتیں اسلام آباد کی القدس ریلی میں بھرپور شرکت کریں گی ،ْمشاورتی اجلاس کا فیصلہ

جمعہ مئی 22:53

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 25 مئی2018ء) القدس کی آزادی کی جدوجہد ہمارے ایمان کا حصہ ہے ، ہم اس کے لیے اپنی پوری توانائیاں خرچ کریں گے ، فلسطینی مظلوم ہیں امریکا اسرائیل کا سرپرست ہے ۔ بیت المقدس فلسطین کا دارلخلافہ ہے یہ بات ملی یکجہتی کونسل پاکستان کے سیکریٹری جنرل لیاقت بلوچ نے کونسل کے مشاورتی اجلاس سے صدارتی خطاب میں کہی ۔

انھوں نے کہا کہ گزشتہ کئی برسوں سے جمعة الوداع کے موقع پر امت اسلامیہ یوم القدس کے طور پر مناتی چلی آرہی ہے اس کا مقصد پوری دنیا پر یہ ظاہر کرنا ہے کہ ہم قدس پر صہیونی قبضے کو کسی صورت قبول نہیں کریں گے ۔ امریکا نے بیت المقدس میں اپنا سفارتخانہ منتقل کرکے اس سلسلے میں تمام عالمی قوانین کو پامال کر دیا ہے ۔ اس لحاظ سے اس برس کا یوم القدس خصوصی اہمیت اختیار کر گیا ہے ۔

(جاری ہے)

ملی یکجہتی کونسل پہلے بھی یوم القدس کے موقع پر سیمینار اور ریلیون کا انعقاد کرتی چلی آئی ہے اس سال بھی ہم یوم القدس کے موقع فلسطینیوں کے ساتھ اپنی یکجہتی کا اظہار کریں گے اور اتحاد امت کا مظاہرہ کریں گے ۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے اسلامی تحریک کے سیکریٹری علامہ عارف واحدی نے کہا کہ ہم یوم القدس اور یوم آزادی پاکستان کے تمام پروگراموں میں بھرپور شرکت کی جائیگی ،ْکونسل کے ڈپٹی سیکریٹری جنرل علامہ ثاقب اکبر نے کہا کہ قدس الشریف اس وقت صیہونی پنجے تلے ہے ، ٹرمپ نے اپنا سفارتخانہ بیت المقدس منتقل کر لیا ہے اور ایک ریاستی حل کی جانب بڑھ رہا ہے ۔

اس صورتحال میں امت اسلامیہ ، او آئی سی ، عرب لیگ اور دیگر مسلم اتحاد حیرت سے ایک دوسرے کا منہ دیکھ رہے ہیں ۔ ثاقب اکبر نے کہا کہ ملی یکجہتی کونسل پاکستان گزشتہ برسوں کی مانند اس برس بھی یوم آزادی پاکستان اور یوم القدس کے حوالے سے سیمینار اور ریلی منعقد کرے گی جس میں کونسل کی تمام جماعتیں شرکت کریں گی ۔ تنظیم العارفین کے ناظم اعلی صاحبزادہ سلطان احمد علی نے کہا کہ اس وقت ایک طاقتور اور متحد پیغام کی ضرورت ہے ہم کونسل کے پروگراموں میں بھرپور شرکت کریں گے ۔

تقریب سے جماعت اسلامی کے نائب امیر میاں محمد اسلم ، جماعت اہل حدیث کے راہنما پروفیسر سیف اللہ خالد ، محمد صدیق ، جماع? الدعوہ کے شوکت سلفی ، جماعت اسلامی راولپنڈی کے امیر عارف شیرازی ، جماعت اسلامی اسلام آباد کے نائب امیر کاشف چوہدری ، جمعیت علمائے پاکستان نورانی کے مرکزی راہنما علامہ حیدر علوی اور طاہر تنولی ، اسلامی تحریک اسلام آبا دکے راہنما مولانا نصیر الحسن موسوی ، محمد علی کاظمی ، تنظیم اسلامی کے راہنما ڈاکٹر امتیاز ، تحریک جوانان پاکستان کے راہنما مولانا عمران سندھو، البصیرہ کے محققین علامہ سید محمد سبطین شیرازی اور مفتی امجد عباس ، تحریک منہاج القرآن کے نائب صدر میر واعظ ترین، ایم ڈبلیو ایم کے راہنما ارشاد عباس اور وفا عباس، جمعیت اتحاد علماء، کونسل کے میڈیا کوارڈینیٹر شاھد شمسی اور دیگر اہم قائدین نے شرکت کی ۔