لاڑکانہ ، دو سگے بھائیوں کے قتل کا مقدمہ حسنہ جتوئی کی مدعیت میں 25 ملزمان کے خلاف درج

جمعہ جون 17:54

لاڑکانہ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 15 جون2018ء) لاڑکانہ کے قریب تھانہ پیر شیر ایٹ عاقل کے حدود میں ایک روز قبل جتوئی برادری کے دو گروپوں میں دیرینہ دشمنی کے معاملے پر مسلح افراد کی فائرنگ سے قتل ہونے والے مقتول دو سگے بھائیوں قربان علی جتوئی اور مشتاق جتوئی سمیت غلام مصطفیٰ جتوئی کے قتل کا مقدمہ مقتولین کے ورثا خاتون حسنہ جتوئی کی مدعیت میں 25 ملزمان کے خلاف درج کیا گیا ہے۔

(جاری ہے)

مقدمہ درج ہونے کے بعد ملزمان کی گرفتاری کے لیے پولیس کی جانب سے گاؤں نور خان جتوئی سمیت دیگر علاقوں میں چھاپے مارے گئے تاہم آخری اطلاع موصول ہونے تک کوئی گرفتاری عمل میں نہ آسکی۔ پولیس کے مطابق ملزمان اپنے گھر خالی کرکے فرار ہوگئے۔ مقتولین کے ورثا خاتون حسنہ جتوئی کی مدعیت میں 25 ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا ہے تمام جلد واقعے میں ملوث ملزمان کو گرفتار کیا جائے گا۔ دوسری جانب مقتولین کے ورثا خواتین حسنہ خاتون جتوئی اور صغریٰ جتوئی نے پریس کلب پہنچ کر مطالبہ کیا کہ واقعے میں ملوث ملزمان کو گرفتار کرکے تحفظ فراہم کی جائے۔

متعلقہ عنوان :