منشیات اور اقرباپروری کے الزام لگا کر بالی ووڈ کو گِرایا نہیں جاسکتا، ہیما مالنی

لوگوں کوبالی ووڈ پر منشیات اور اقرباپروری جیسے جھوٹے الزامات لگاتے ہوئے دیکھتی ہوں تو تکلیف ہوتی ہے، انٹرویو

بدھ ستمبر 16:27

منشیات اور اقرباپروری کے الزام لگا کر بالی ووڈ کو گِرایا نہیں جاسکتا، ..
ممبئی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 16 ستمبر2020ء) بالی ووڈ کی ماضی کی صف اول اداکارہ اور بی جے پی (بھارتی جنتیا پارٹی) کی رکن پارلیمنٹ ہیما مالنی نے کہا ہے کہ منشیات اور اقربا پروری کے جھوٹے الزامات لگا کر بالی ووڈ کو گِرایا نہیں جاسکتا ہے، بالی ووڈ ہمیشہ اعلیٰ عزت میں ہی رہے گا۔ایک انٹرویو میں ہیما مالنی نے سابق اداکارہ اور رکن پارلیمنٹ جیا بچن کی حمایت کرتے ہوئے کہا کہ ’میں تمام لوگوں کو بتانا چاہتی ہوں کہ بالی ووڈ ایک خوبصورت جگہ، ایک تخلیقی دٴْنیا، فن اور ثقافت کی صنعت ہے۔

ہیما مالنی نے کنگنا رناوت کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ ’جب میں لوگوں کوبالی ووڈ پر منشیات اور اقرباپروری جیسے جھوٹے الزامات لگاتے ہوئے دیکھتی ہوں تو مجھے بہت تکلیف ہوتی ہے۔

(جاری ہے)

اٴْنہوں نے کہا کہ ’کوئی بھی داغ ہمیشہ باقی نہیں رہتا ہے اِسی طرح بالی ووڈ پر لگائے گئے داغ بھی ایک دن ختم ہوجائیں گے۔ہیما مالنی نے بالی ووڈ کے لیجنڈری اداکاروں کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا کہ ’بالی ووڈ نے ہمیں بہت سے عظیم فنکار دیے ہیں جنہیں لوگوں نے خوب پسند کیا، راج کپور، دیو آنند، دھرمیندر (ہیما مالنی کے شوہر) اور امیتابھ بچن یہ وہ معروف روشن فنکار ہیں جنہوں نے دٴْنیا بھر میں بالی ووڈ کا ایک مقام بنایا۔

اداکارہ نے کہا کہ ’بالی ووڈ صرف ایک فلم انڈسٹری نہیں ہے بلکہ یہ ہندوستان ہے‘۔