اسلام آباد، ڈی چوک پر کرایہ نہ بڑھانے پر پبلک ٹرانسپورٹرز کی احتجاجی ریلی، انتظامیہ کی دوڑیں لگ گئیں

اے ڈی سی جی ڈیڑھ گھنٹہ تک طویل مذاکرات کر کے احتجاج ختم کرانے میں کامیاب

پیر 9 اگست 2021 22:41

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 09 اگست2021ء) وفاقی دارلحکومت میں پارلیمنٹ کے سامنے ڈی چوک پر کرایہ نہ بڑھانے پر پبلک ٹرانسپورٹرز نے احتجاجی ریلی نکالی جس پر ضلعی انتظامیہ کی دوڑیں لگ گئیں،ڈی چوک کو خار دار تاروں سے سیل کرنے کے ساتھ پولیس کی بھاری نفری بھی تعینات کی گئی ،اے ڈی سی جی ڈیڑھ گھنٹہ تک طویل مذاکرات کر کے احتجاج ختم کرانے میں کامیاب ہو ئے ،محرم الحرام کے فوری بعد ٹرانسپورٹ کے کرایہ بڑھانے پر رضا مندی ظاہر کر دی گئی،مظاہرین معائدہ کر کے منتشر ہو گئے ،گزشتہ روز سوموار کو سینکڑوں ٹرانسپورٹرز نے احتجاجی ریلی نکالی اور ڈی چوک کے قریب پہنچ گئے ،اس موقع پر ضلعی انتظامیہ کے افسران نے کئی مرتبہ رابطہ کرکے ریلی منسوخ کرنے کا کہا مگر ایسا ممکن نہ ہوا،پولیس نے ڈی چوک کو خار دار تاروں سے سیل کر کے بھاری نفری تعینات کر دی تھی،تاہم اے سی انڈسٹریل ایریا محمد ارشاد بھٹی نے مذاکرات کیے اور ٹرانسپورٹرز کو راضی کرنے میں کامیا ب ہو ا ہے ،معائدہ کے تحت وفاقی دارلحکومت میں چلنے والی ٹرانسپورٹ کے کرایہ نامہ میں ترمیم کر کے ڈیزل اور پٹرول کی قیمتوں کے تعین کے حساب سے آضافہ کیا جائے گا،۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ظفر ملک