سوئیڈن کے انجینئرز نے نمک اور پانی سے بجلی بنانے والا دنیا کا سب سے چھوٹا فیول سیل بنالیا ،اسمارٹ فون کو خاموش نہیں ہونے دے گا

اتوار جنوری 09:42

کرا چی (اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔3جنوری۔2016ء)سوئیڈن کے انجینئروں نے نمک اور پانی سے بجلی بنانے والا دنیا کا سب سے چھوٹا فیول سیل بنالیا ہے جو آپ کی اسمارٹ فون کو خاموش نہیں ہونے دے گا۔اس فیول سیل کو جے اے کیو کا نام دیا گیا ہے جس کا چارجر صرف نمک اور پانی استعمال کرتا ہے اور یہ سیل اتنا چھوٹا ہے کہ آسانی سے جیب میں سما سکتا ہے۔ فیول سیل دوبارہ استعمال شدہ(ری سائیکل)اجزا سے بنایا گیا ہے اور اتنی بجلی تیار کرتا ہے کہ اس سے اسمارٹ فون کو چلانا ممکن ہے، اس میں بجلی بھرنے کے لیے کسی تار کی نہیں بلکہ ایک کارڈ کی ضرورت ہوتی ہے جس میں نمک اور پانی موجود ہوتا ہے، اس کے بعد ایک یوایس بی تار کے ذریعے چارجر کو فون سے جوڑکر اسے بجلی پہنچائی جاسکتی ہے۔

سیل کے اندر نمک اور پانی ہائیڈروجن بناتے ہیں اور ہر کارڈ 1800ایم اے ایچ بجلی پیدا کرتا ہے اور عین اتنی ہی تیزی سے بیٹری چارج کرتا ہے جو بجلی کے چارجر کرتے ہیں۔

(جاری ہے)

کمپنی کے مطابق دنیا بھر میں فون، کیمروں، ٹیبلٹ اور دیگر دستی آلات کی وجہ سے بجلی اور چارجنگ کی ضرورت بڑھتی ہی جارہی ہے جس کے لیے ہم نے ماحول دوست ایجاد کی ہے اور ہر وقت چارج آپ کے ساتھ رہتا ہے۔کمپنی کا کہنا ہیکہ اسے پوری دنیا میں ساتھ لے کر گھوما جاسکتا ہے اور کسی ایئرلائن کو اس پر اعتراض نہ ہوگا کیونکہ یہ فیول سیل ان کی ہدایات کے تحت ہی بنایا گیا ہے جو ٹیبلٹ بھی چارج کرسکتا ہے۔

متعلقہ عنوان :

Your Thoughts and Comments