آر پی او دفتر میں کھلی کچہری کا انعقاد،سائلین کی دادرسی کے لئے فوری احکامات جاری

جمعہ ستمبر 19:09

راولپنڈی ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 20 ستمبر2019ء) ریجنل پولیس آفیسر راولپنڈی محمد احسان طفیل نے اپنے دفتر میں کھلی کچہری کا انعقاد کیا۔ کھلی کچہری میں آئے سائلین نے اپنی دادرسی کے لئے درخواستیںپیش کیں جن پر متعلقہ افسران کو فوری کارروائی کے احکامات جاری کئے گئے۔ تفصیلات کے مطابق آر پی او راولپنڈی محمد احسان طفیل نے حکومت پنجاب کی اوپن ڈور پالیسی اور آئی جی پنجاب کے احکامات کے مطابق آر پی او دفتر میں کھلی کچہری کا انعقاد کیا۔

کھلی کچہری میں آئے ہوئے سائلین نے اپنی دادرسی کے لئے آر پی او راولپنڈی کو اپنی درخواستیں پیش کیں۔کھلی کچہری میںسائل خواجہ احسان سکنہ گوجرخان نے درخواست پیش کی کہ سائل کیخلاف تھانہ صدر واہ راولپنڈی میں جھوٹامقدمہ درج ہوا ہے جس پر مذکورہ کی درخواست کو تبدیلی تفتیش کیلئے بورڈ میں بھجوایا گیا۔

(جاری ہے)

سائلہ نسیم اختر نے تھانہ ائیرپورٹ میں درج مقدمہ کے متعلق درخواست دی کہ مقدمہ درست درج نہ ہوا ہے جس پر سائلہ کی درخواست کو تبدیلی تفتیش بورڈ میں بھجوا یا گیا۔

سائلہ روبی سکنہ جہلم نے بذریعہ زیبا اپنی درخواست میں موقف اختیار کیاکہ طاہر کیانی نامی شخص ہراساں کرتا ہے، جس پر آرپی او راولپنڈی نے ڈی پی او جہلم کو فوری انکوائری و کارروائی کے احکامات جاری کئے۔ راجہ عنصر نے درخواست میں موقف اختیار کیا کہ اپنی گاڑی رنگ کے لئے دی جو ملک شاہد وغیرہ کے ساتھ ملکر غائب کر دی گئی مقدمہ درج نہ ہوا، جس پر سی پی او راولپنڈی کو فوری انکوائری و کارروائی کرنے کے احکامات جاری کیے گئے۔

دیگر متفرق نوعیت کی درخواستوں پر متعلقہ اضلاع کے افسران کو فوری انکوائری وکارروائی کے احکامات جاری کیے گئے۔ آرپی او راولپنڈی نے کہا کہ اختیارات سے تجاوز اور انصاف کی بروقت فراہمی کو یقینی نہ بنانے والے پولیس افسران کوسخت محکمانہ احتساب کا سامنا کرنا ہو گا۔ کھلی کچہری کے انعقاد کا مقصد سائلین کو بروقت انصاف کی فراہمی اور میرٹ کو ہر صور ت یقینی بنانا ہے۔انصاف میں رکاوٹ اور تاخیر کو کسی بھی صورت برداشت نہیں کیا جائیگا۔ عوام کے جان و مال کا تحفظ اور انصاف کی فوری فراہمی ہماری اولین ترجیح ہے۔

راولپنڈی شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments