توانائی مو سمیاتی تبدیلیوں بارے پیرس معاہدہ ترقیاتی ایجنڈا پر عمل درآمد کے لئے مرکزی حیثییت رکھتی ہے

لہذا توانائی کے ہدف پر جامع اور موثر عمل درآمد فور ی اور بہت اہم ہی ، اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ملیحہ لودھی کا نیویارک میں پائیدار توانائی کے بارے اجلاس سے خطاب

جمعہ اپریل 13:14

توانائی مو سمیاتی تبدیلیوں بارے پیرس معاہدہ ترقیاتی ایجنڈا پر عمل ..
نیو یارک ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 20 اپریل2018ء) اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ملیحہ لودھی نے اقوا م متحدہ کے توانائی سب کے لئے کے ہدف کی تکمیل کے لئے کوششیں تیز کرنے کی ضرورت پر زور دیا ہے تاکہ سستی توانائی تک سب کی رسائی کویقینی بنانے اور دیگر اعلی ترجیحی دیگراغراض ومقاصد بھی پورے کئے جاسکیں ۔ نیویارک میں پائیدار توانائی کے بارے میں اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے ملیحہ لودھی نے کہا کہ ہم سب کو معلوم ہے کہ توانائی مو سمیاتی تبدیلیوں بارے پیرس معاہدہ ترقیاتی ایجنڈا پر عمل درآمد کے لئے مرکزی حیثییت رکھتی ہے لہذا توانائی کے ہدف پر جامع اور موثر عمل درآمد فور یاور بہت اہم ہے ۔

انہوں نے اجلاس کے افتتاحی سیشن سے خطاب کرتے ہوئے مندوبین کی بڑی تعداد کو بتایا کہ پائیدار ترقی کے ہدف 7 میں سب کی سستی اور صاف توانائی تک رسائی پر زور دیا گیا ہے اور توانائی کے اس عالمی ہدف پر خاص طور پر توجہ مرکوز کی گئی ہے اس اجلاس کا ا انعقاد پاکستان ، ڈنمارک اور ناروے نے اقوام متحدہ کے محکمہ برائے برائے سماجی واقتصادی امور کے تعاون سے کیا جس میں کم ترقی یافتہ ممالک کے اعلی نمائندوں نے شرکت کی ۔

(جاری ہے)

اجلاس سے قابل تجدید توانائی کے بین لا قوامی ادارہ کے ڈائریکٹر جنرل عدنان امین نے ویڈیو لنک کے ذریعے خطاب کیا ۔ پاکستا ن کی سفیر ملیحہ لودھی نے اقتصادی ترقی کے لئے توانائی کے کر دار کی اہمیت پر زور دیا اور کہا کہ غربت کے خاتمہ ، موسمایتی تبدیلیوں کی روک تھام ، تعلیم ، خوراک اور پانی کی قلت پر قابو پانے کے لئے توانائی کے ہدف کا حصول بہت ضروری ہے ۔