کراچی والے پی پی کو ووٹ دینگے،مخالفین کی بھکاوڑے میں نہیں آئیں گے، مراد علی شاہ

ْپیپلز پارٹی نے کبھی بھی لسانیت کی بات نہیں کی ،ریکارڈ ترقیاتی کام کروائے، وزیراعلیٰ سندھ

ہفتہ مئی 18:35

کراچی والے پی پی کو ووٹ دینگے،مخالفین کی بھکاوڑے میں نہیں آئیں گے، ..
کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 05 مئی2018ء) وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا کہ کراچی کے لوگ پاکستان پیپلز پارٹی کو ہی ووٹ کریں گے کیوں کہ پی پی نے کبھی لسانیت کی بات نہیں کی پہلے بھی ایسا ہوتا رہا ہے کراچی والے اب انکے بہکاوے میں نہیں آئیں گے، ان خیالات کا اظہار انھوں نے این جے وی اسکول کے دورہ کے بعد میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔

اس موقع پر ان کے ہمراہ وزیر تعلیم جام مہتاب ڈہر اور دیگر متعلقہ حکام بھی موجود تھے۔ وزیراعلیٰ سندھ نے بغیر پروٹوکول کے این جے وی اسکول کا دورہ کیا جہاں پر انھوں نے ٹریفک حکام کو گاڑی کے ا?گے پروٹوکول دینے سے منع کردیا، وزیراعلیٰ سندھ کے اسکول پہنچے پر اسکول انتظامیہ اور اساتذہ نے انکا پرتپاک استقبال کیا۔

(جاری ہے)

اسکول کے پرنسپل نے انھیں کلاسوں کا معائنہ بھی کروایا جہاں پر انھوں نے کورس کے متعلق بچوں سے بات چیت کی اور پیار بھی کیا۔

انھوں نے اپنے خطاب میں کہا کہ میں نے اپنے دؤر اقتدار میں صوبے کی ترقی وخوشحالی کیلئے جو بھی تعلیم وصحت کے شعبوں کی پالیسیز شروع کیں انکا خاتمہ کوئی نہیں کرے گا۔ ا?ج میں جس مقام پر کھڑا ہوں، اس میں میرے والدین کا بڑا کردار ہے، ایم کیو ایم جتنی مرضی جلسے کرے ہم نے اجازت دے دی ہے۔ نارائن جگن ناتھ ویدیا ہائی اسکول (این جے وی) کے طلباء کو خطاب کرتے ہوئے کہا کہ طالب علم کی شخصیت سازی میں والدین اور استاد کے کردار کو برابر کا درجہ حاصل ہے، انھوں نے کہا کہ کئی دنوں سے سوچ رہا تھا کہ این جے وی اسکول کا دورہ کروں لیکن مصروفیات کے باعث نہیں کرسکا، این جے وی کے طلبائ پاکستان کے مسقبل کے معمار ہیں انھوں نے پوری دنیا میں کام کمایا، اس اسکول کی اپنی ایک تاریخی حیثیت ہے جس نے بڑے بڑے سیاستدان، انجنیئر اور ڈاکٹرز اس ملک کو دیے اور وہ آج اپنا اور ملک کا نام روشن کررہے ہیں۔

انھوں نے طلبائ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ این جے وی اپنے وقت کا بہترین تعلیمی انسٹیٹوٹ تھا اور مجھے امید ہے کہ یہی روایت ا?ج کے طلبائ بھی برقرار رکھیں گے۔ انھوں نے کہا کہ اسکول کی سڑکیں اور دیگر انتظامات دیکھ کر مجھے دلی و روحانی سکون پہنچا ہے اور مجھے بے انتہا خوشی ہوئی ہے کہ تعلیمی سرگرمیاں بحال ہیں، ہماری نجی شعبہ پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ کا اچھی مثال ہونے کا نتیجہ ہے، ہم نے یہاں ریکارڈ ترقیاتی کام کروائے انھوں اسکول انتظامیہ کو یقین بھی دلایا کہ مزید حکومت سندھ آپ لوگوں کی مدد کرتی رہے گی۔

بعدازاں انھوں نے میڈیا نمائندوں نے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ اس ملک میں سیاسیت کی اجازت سب کو ہے، ایم کیو ایم کو جلسے کی اجازت دے دی ہے، سیاہ دؤر جو گزرا تھا اسکا خاتمہ کردیا ہے، بائیس اگست سے پہلے والے دور کو واپس آنے نہیں دیں گے، کراچی کی عوام نے نفرت انگیزی پھیلانے والوں کو مسترد کردیا ہے، آئندہ عام انتخابات میں کراچی کی عوام پاکستان پیپلز پارٹی کو ہی ووٹ کریں گے، جو نعرے اور پمفلیٹ تقسیم کیے ہیں ان نعروں سے کچھ نہیں، میں کچھ بھی کہوں گا تو کہیں گے جلسہ خراب کررہے ہیں، جو بھی جلسہ ہونے جارہے ہیں اس میں ادھر ادھر کی عوام کٹھی کرکے کیا جارہے ، انھوں نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ ٹنگی گراؤنڈ کا نام بھی کسی نے نہیں سنا تھا اور نہ کسی کو یاد تھا لیکن ہمارے قائد چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے وہاں تاریخی اور کامیاب جلسا کرکے انھیں پریشان کردیا ہے، انھوں نے ایک اور سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ پی پی نے کبھی لسانیت کی بات نہیں کی، پہلے بھی ایسی باتیں کرکے کراچی کی عوام کو ورغلایا گیا لیکن اب کرااچی کی عوام انکے بہکاوے میں نہیں آئی گی