عوام ووٹ دیتے وقت مسلم لیگ (ن) کی کارکردگی ذہن میں رکھیں ، شاہد خاقان عباسی

25 جولائی کو فیصلہ آپ نے کرنا ہے، آپ سیاست کو دیکھ بھال کر بہتر فیصلہ کریں گے ،پاکستان کی تاریخ میں ہائی وے کے اتنے منصوبے نہیں بنے جتنے مسلم لیگ(ن) کے دور میں بنے، کیا پاکستان میں پہلے وسائل نہیں تھی ،پشاور سے بیٹھ کر ہزارہ کے بجلی کے مسائل حل نہیں ہوسکتے ،مجھے نظر نہیں آتا کہ لوگ دھرنے دینے والوں کو ووٹ دیں گے، وزیراعظم کا شاہ مقصود حویلیاں موٹروے اور حویلیاں تھاکوٹ ایکسپریس وے منصوبے پر جاری کام کا معائنہ کرنے کے بعد ایک تقریب سے خطاب

منگل مئی 18:58

عوام ووٹ دیتے وقت مسلم لیگ (ن) کی کارکردگی ذہن میں رکھیں ، شاہد خاقان ..
حویلیاں(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 29 مئی2018ء) وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے عوام پر زور دیا ہے کہ 25 جولائی کو عام انتخابات کے دن ووٹ دیتے وقت وہ حکمران جماعت مسلم لیگ (ن) کی کارگردگی کو ذہن میں رکھیں ، 25 جولائی کو فیصلہ آپ نے کرنا ہے، آپ سیاست کو دیکھ بھال کر بہتر فیصلہ کریں گے ،پاکستان کی تاریخ میں ہائی وے کے اتنے منصوبے نہیں بنے جتنے مسلم لیگ (ن) کے دور میں بنے، کیا پاکستان میں پہلے وسائل نہیں تھی ،پشاور سے بیٹھ کر ہزارہ کے بجلی کے مسائل حل نہیں ہوسکتے ،مجھے نظر نہیں آتا کہ لوگ دھرنے دینے والوں کو ووٹ دیں گے۔

منگل کو شاہ مقصود حویلیاں موٹروے اور حویلیاں تھاکوٹ ایکسپریس وے منصوبے پر جاری کام کا معائنہ کرنے کے بعد ایک تقریب سے خطاب میں وزیراعظم نے کہا کہ 2013 میں عوام نے درست انتخاب کیا ،اسی لیے ترقی ہو رہی ہے ، نواز شریف نے جو بھی وعدے کیے اسے پورا کیا ،ہم نے جو بھی منصوبے شروع کیے، اسے مکمل بھی کرکے دکھایا۔

(جاری ہے)

۔وزیراعظم نے کہا کہ ہماری کوشش تھی کہ حکومت مدت پوری کرے ،اب 25 جولائی کو الیکشن ہوگا اور عوام جو فیصلہ کریں گے، وہی قابل قبول ہوگا۔

انہوں نے قوم کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ 25 جولائی کو فیصلہ آپ نے کرنا ہے، آپ سیاست کو دیکھ بھال کر بہتر فیصلہ کریں گے۔۔وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے اپوزیشن جماعتوں خصوصا پاکستان تحریک انصاف پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ مجھے نظر نہیں آتا کہ لوگ دھرنے دینے والوں کو ووٹ دیں گے۔وزیر اعظم نے کہاکہ 100 دن کا پروگرام دینے والے وہ لوگ ہیں ،جو 5 سال باتیں کرتے رہے، منصوبوں کی مخالفت کرتے رہے، دھرنے دیتے رہے لیکن اب وہ یہ توقع رکھتے ہیں کہ عوام انہیں ووٹ دیں گے تو ایسا نہیں ہے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ عوام کا ووٹ انشا اللہ خدمت، ترقی اور شرافت کی سیاست کرنے والوں کو ملے گا اور یہ سیاست صرف مسلم لیگ (ن) اور نواز شریف کی سیاست ہے۔انہوںنے کہاکہ مسلم لیگ (ن) کے منتخب لوگوں نے عوام کی خدمت کی اور جولائی میں یہ لوگ واپس آپ کے پاس آئیں گے کیونکہ فیصلہ عوام نے کرنا ہے اور یہی جمہوریت کا حسن ہے، جو فیصلہ عوام کریں گے اسی کے مطابق آئندہ 5 سال کیلئے حکومت بنے گی۔

وزیر اعظم نے کہا کہ یہ منصوبے جاری ہیں اور وہ وقت دور نہیں کہ جب خنجراب سے گوادر تک موٹروے سے اترے بغیر سفر کرسکیں گے اور پشاور سے کراچی کا سفر دنوں میں نہیں گھنٹوں میں ہوگا۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کی تاریخ میں ہائی وے کے اتنے منصوبے نہیں بنے جتنے مسلم لیگ (ن) کے دور میں بنے، کیا پاکستان میں پہلے وسائل نہیں تھی کیوں پاکستان میں پہلے ترقی نہیں ہوئی کیوں صرف مسلم لیگ (ن) کے دور میں پاکستان میں ترقی ہوتی ہے۔مخالفین پر تنقید کرتے ہوئے انہوںنے کہاکہ پشاور سے بیٹھ کر ہزارہ کے بجلی کے مسائل حل نہیں ہوسکتے، یہاں علیحدہ کمپنی کی ضرورت ہے، جس کے لیے ہم نے احکامات جاری کردیئے۔۔