نگراں وزیراعلیٰ کے مسئلے پر اپوزیشن کا رویہ نامناسب تھا ، امن وامان کا سہراقوم اور پاک فوج کے سہرا ہے،

الیکشن کے التواء سے متعلق بلوچستان اسمبلی کی قرارداد اصولوں پر مبنی تھی،جیتنے کی امید نہیں 100فیصد یقین ہے ، میر سرفراز بگٹی

منگل جون 21:34

نگراں وزیراعلیٰ کے مسئلے پر اپوزیشن کا رویہ نامناسب تھا ، امن وامان ..
ڈیرہ بگٹی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 05 جون2018ء) سابق صوبائی وزیر داخلہ میر سرفراز بگٹی نے کہاہے کہ نگراں وزیراعلیٰ کے مسئلے پر اپوزیشن کا رویہ نامناسب تھا جو کام 70سال میں نہ ہوسکے وہ 5سال میں مکمل ہوئے ،امن وامان کا سہراقوم اور پاک فوج کے سہرا ہے الیکشن کے التواء سے متعلق بلوچستان اسمبلی کی قرارداد اصولوں پر مبنی تھی ۔انہوں نے میڈیا نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ ان جیتنے کی صرف امید نہیں بلکہ 100فیصد یقین ہے جو کام 70سال میں نہ ہوسکے ہمارے دور میں وہ 5سال میں مکمل ہوئے۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہاکہ ضلع بھر میں اہم سڑکیں تعمیر کی آخری مراحل میں ہیں ۔ہم دہشت گردوں کی گولی سے نہیں ڈرتے ،صوبے میں امن وامان کے قیام کا سہرا قوم اور پاک فوج کے سر ہے۔ انہوں نے کہاکہ الیکشن کے التواء سے متعلق بلوچستان اسمبلی کی قرارداد اصولوں پر مبنی تھی گرمی کی شدت بھی الیکشن التواء کی اہم وجوہات تھی ۔میرسرفرازبگٹی کاکہناتھاکہ نگراں وزیراعلیٰ کے مسئلے پر اپوزیشن جماعتوں کا رویہ نامناسب تھا بلکہ اس مسئلے پر پشتونخوامیپ سمیت تمام اپوزیشن جماعتیں تقسیم کاشکار رہیں ۔