سکھر: علاقے گمبٹ کی مکین شیخ برادری سے تعلق رکھنے والے مرد و خواتین عابد حسین شیخ ،مسمات رانی خاتون، گلشن شیخ،مریم خاتون نے قتل میں ملوث افراد کی عدم گرفتاری اور دو ماہ گذرنے کے بعد بھی انصاف نہ علامتی بھوک ہٹرتال ، احتجاجی دھرنا

جمعرات دسمبر 22:54

سکھر(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 13 دسمبر2018ء) خیرپور کے نواحی علاقے گمبٹ کی مکین شیخ برادری سے تعلق رکھنے والے مرد و خواتین عابد حسین شیخ ،مسمات رانی خاتون، گلشن شیخ،مریم خاتون نے قتل میں ملوث افراد کی عدم گرفتاری اور دو ماہ گذرنے کے بعد بھی انصاف نہ ملنے اور جوابداروں کی جانب سے سنگین نتائج کی ملنے والی دھمکیاں کے خلاف سکھر پریس کلب کے سامنے علامتی بھوک ہٹرتال اور احتجاجی دھرنا جاری رکھا اورقتل میں ملوث ملزمان کی گرفتاری کیلئے نعرے بازی کی اس موقع پر متاثرین نے بتایا کہ دو سال قبل سیال برادری کے بااثر افراد جوابداروں جاوید سیال، غلام عباس، غلام شبیر ،جاوید نے شیخ برادری کے زوالفقار علی شیخ ،مرتضی شیخ اقبال کیساتھ ملکر ہماری ایک ایکڑ زرعی زمین پر قبضے کرنے کیلئے ہمارے گھروں پر حملہ کیا اور مزحمت پر ہمارے عزیزوں غلام حسین ،علی رضا، حسین شیخ کو کوقتل جبکہ عابد شیخ ٹانگ میں گولی لگنے سے زخمی ہو گیا تھا پولیس نے جائے وقوعہ سے ایک ملزم گرفتار کیا تھا تاہم قتل میں ملوث ملزمان ابتک آزاد گھوم رہے ہیں دو ماہ قبل آئی جی سندھ نے بھی انصاف کی یقین دہانی کرائی تھی لیکن کچھ نہیں ہو سکا ہے شکایت پر جوابدار سنگین نتائج کی دھمکیاں دے رہے ہیں مظاہرین نے بالا حکام سے انصاف و تحفظ فراہمی سمیت قتل میں ملوث ملزمان کی گرفتاری کا مطالبہ کیا ہے۔

#