Live Updates

اردن کے انسٹیٹیوٹ نے عمران خان کو ’’سال کی بہترین شخصیت‘‘ قرار دے دیا

وزیراعظم پاکستان بدعنوانی اور بد انتظامی معاملات کو حل کرنے کے لیے پٴْرعزم ہیں، پروفیسر ایس عبد اللہ

بدھ اکتوبر 19:14

اردن کے انسٹیٹیوٹ نے عمران خان کو ’’سال کی بہترین شخصیت‘‘ قرار دے ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 09 اکتوبر2019ء) اردن کے رائل اسلامی اسٹریٹجک اسٹڈیز سینٹر نے دنیا کے سب سے زیادہ قابل مسلمانوں کی اپنی حالیہ فہرست میں وزیر اعظم عمران خان کو ’سال کی بہترین شخصیت‘ نامزد کر دیا۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق رائل انسٹیٹیوٹ آف اسٹریٹجک اسٹڈیز نے 500 بااثر مسلمانوں کی فہرست جاری کی ہے جس میں فلسطین سے تعلق رکھنے والی امریکی کانگریس کی رکن راشدہ طالب کو ’سال کی بہترین عورت‘ قرار دیا ہے۔

مصر کے دارالحکومت قاہرہ میں امریکی یونیورسٹی کے پروفیسر ایس عبداللہ نے کہا کہ کرکٹ ایک کھیل جس کی میں نے ہمیشہ خوبصورتی اور شدید مسابقتی کھیل کے امتزاج کے لیے تعریف کی ہے۔ اگر 1992 میں 500 مسلمانوں کی فہرست جاری کی جاتی تو اس وقت میں عمران خان کو سال کا بہترین انسان نامزد کرتا جب انہوں نے کرکٹ ورلڈ کپ میں کامیابی حاصل کی تھی۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ عمران خان کا کارنامہ صرف یہ نہیں کہ انہوں نے ورلڈ کپ جیتا بلکہ میں ان کی فنڈ ریزنگ مہم سے بھی متاثر ہوں جس سے انہوں نے کینسر کے علاج کے لیے اسپتال اور ریسرچ سینٹر بنایا۔

پروفیسر ایس عبداللہ نے کہا کہ 1985 میں کینسر کی وجہ سے اپنی والدہ کے انتقال کے بعد عمران خان نے کینسر کے علاج کے لیے اسپتال بنایا جس سے ان کی مقبولیت میں بہت زیادہ اضافہ ہوا۔ جہاں 75 فیصد افراد اپنا مفت علاج کراتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ عمران خان نے اپنی 22 سالہ جدوجہد کے بعد وزارت عظمیٰ کا عہدہ حاصل کیا اور وہ بدعنوانی اور بد انتظامی معاملات کو حل کرنے کے لیے پٴْرعزم ہیں۔پروفیسر ایس عبداللہ نے کہا کہ عمران خان کی طرف سے عہدہ سنبھالنے کے بعد مودی کو امن مذاکرات کے لیے خط لکھے گئے لیکن بھارتی وزیر اعظم نے ان کا کوئی جواب نہیں دیا۔ میرے خیال میں یہ بھی ان کی سب سے بہترین کوشش تھی جو انہوں نے کی۔
وزیراعظم کااقوام متحدہ جنرل اسمبلی میں خطاب سے متعلق تازہ ترین معلومات