پنجاب، وزیراعظم کی بلدیاتی انتخابات فوری طور پر کروانے کی ہدایت

مقامی حکومت جمہوریت کا بنیادی ڈھانچہ ہے، مضبوط بلدیاتی نظام کے بغیر جمہوریت نامکمل ہے، وزیراعظم عمران خان

Danish Ahmad Ansari دانش احمد انصاری منگل 14 ستمبر 2021 22:38

پنجاب، وزیراعظم کی بلدیاتی انتخابات فوری طور پر کروانے کی ہدایت
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ، اخبار تازہ ترین، 14ستمبر 2021) مقامی حکومت جمہوریت کا بنیادی ڈھانچہ ہے، مضبوط بلدیاتی نظام کے بغیر جمہوریت نامکمل ہے، وزیراعظم عمران خان کی بلدیاتی انتخابات فوری طور پر کروانے کیلئے اقدامات کی ہدایت۔ تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے پنجاب میں بلدیاتی انتخابات فوری طور پر کروانے کیلئے اقدامات کرنے کی ہدایت کر دی۔

وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت پنجاب میں بلدیاتی امور سے متعلق اجلاس ہوا جس میں وزیر بلدیات پنجاب میاں محمود الرشید وڈیو لنک کے ذریعے شریک ہوئے۔اجلاس میں پنجاب حکومت کی وزیراعظم کو صوبے میں نئے لوکل گورنمنٹ ماڈل پر بریفنگ دی گئی۔اس موقع پر وزیراعظم نے کہا کہ مقامی حکومت جمہوریت کا بنیادی ڈھانچہ ہے، مضبوط بلدیاتی نظام کے بغیر جمہوریت نامکمل ہے۔

(جاری ہے)

انہوں نے ہدایت کی کہ بلدیاتی نمائندوں کے براہ راست انتخاب کو یقینی بنایا جائے۔دوسری جانب پنجاب کے بلدیاتی نظام کے بارے اتحادیوں میں بڑا بریک تھرو سامنے آیا، تحریک انصاف اور مسلم لیگ ق کی مشترکہ کمیٹی میں آئندہ بلدیاتی انتخابات کے لئے مسودہ قانون کے سفارشات پر اتفاق کرلیا گیا۔پنجاب میں آئندہ بلدیاتی انتخابات کے لئے مسودہ قانون کے معاملے پر اتحادیوں میں بڑا بریک تھرو سامنے آیا، تحریک انصاف اور مسلم لیگ ق کی مشترکہ کمیٹی میں سفارشات پر اتفاق کرلیا گیا۔

تحریک انصاف ،مسلم لیگ ق کی قیادت کاایک اور مذاکراتی راؤنڈ ہوا، جس میں تحریک انصاف کی جانب سے اسد عمر ،شفقت محمود،غلام سرور نےشرکت کی جبکہ ق لیگ کی جانب سے وفاقی وزیر آبی وسائل مونس اعلیٰ ،طارق بشیرچیمہ شریک ہوئےوزیر بلدیات پنجاب محمود الرشید ،وزیر صنعت اسلم اقبال نے بھی میٹنگ میں شرکت کی ، اجلاس میں اتحادی جماعتوں کی قیادت نے بلدیاتی انتخابات کیلئےمسودہ قانون پرمشاورت کی ، گزشتہ اجلاس میں دونوں اتحادیوں نے مسودہ قانون کےسفارشات مرتب کی تھیں۔

سفارشات وزیراعظم کوبھیجی گئیں اور گائیڈ لائنز کے بعد دوبارہ اتحادی نے تجاویزپرغور کیا، سفارشات کے مطابق نئے بلدیاتی نظام کے تحت پنجاب میں 11میٹرو پولٹین ہوں گی اور 70فیصد سیٹیں متناسب نمائندگی کے طور پر کی جائیں گی جبکہ ہر جماعت اپنی فہرست دے گی۔وزیر اعظم نے مشترکہ اتحادی کمیٹی کا اجلاس آج طلب کر لیا ہے ، ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیراعظم اتحادی کمیٹی کی سفارشات کی حتمی جائزہ لیکرمنظوری دیں گے۔