پاکستان چینی تعاون سے جلد ہی2سینسنگ سیٹلائٹس خلا میں بھیجے گا،چینی میڈیا

سیٹلائٹس لانگ مارچ ٹو سی راکٹ کے ذریعے بھیجے جائیں گے،چینی خلائی اکیڈمی، پاکستانی خلائی ایجنسی سپارکو نے جنوبی افریقہ کی خلائی کمپنی کے تعاون سے تیار کئے

جمعہ مئی 21:37

بیجنگ(اُردو پوائنٹ اخبار آن لائن۔ جمعہ مئی ء)پاکستان چین کے تعاون سے رواں سال 2سینسنگ سیٹلائٹس خلاس میں بھیجے گا،سیٹلائٹس لانگ مارچ ٹو سی راکٹ کے ذریعے بھیجے جائیں گے،سٹیلائٹس چینی خلائی اکیڈمی اور پاکستان کی خلائی ایجنسی سپارکو نے جنوبی افریقہ کی خلائی کمپنی کے تعاون سے تیار کئے ہیں۔چینی اخبار کے مطابق لانگ مارچ ٹو سی راکٹ کی تیاری کا کام مکمل کرلیا گیا ہے جس کے ذریعے جون میں دو سٹیلائٹس خلا میں بھیجے جائیں گے۔

چین پاکستان کے لیے دو سینسنگ سیٹلائٹس اسی سال خلا میں بھیجے گا۔ چین پاکستان کی اکیڈمی آف لانچ وہیکل ٹیکنالوجی کے مطابق جون کے مہینے میں پاکستان کے لیے دو ریموٹ سینسنگ سیٹلائٹس لانچ کیے جائیں گے۔چینی اکیڈمی کا مزید کہنا ہے کہ یہ سیٹلائٹس سمندری لہروں اور ہوائوں کو مانیٹر کریں گے۔

(جاری ہے)

یہ بھی بتایا گیا ہے کہ سیٹلائٹس لانگ مارچ ٹو سی راکٹ کے ذریعے بھیجے جائیں گے، اس راکٹ کی 1999 کے بعد سے یہ پہلی کمرشل لانچنگ ہوگی۔چینی اخبار کے مطابق لانگ مارچ ٹو سی راکٹ کی تیاری کا کام مکمل کرلیا گیا ہے جس کے ذریعے جون میں دو سٹیلائٹس خلا میں بھیجے جائیں گے۔یہ سٹیلائٹس چینی خلائی اکیڈمی اور پاکستان کی خلائی ایجنسی سپارکو نے جنوبی افریقہ کی خلائی کمپنی کے تعاون سے تیار کئے ہیں۔

Your Thoughts and Comments